جمہوریت کی روح کی نفی کرکے 76سالہ چیئرمین نیب کو توسیع دینے کی کوشش کی جا رہی ہے ، شاہد خاقان عباسی 

جمہوریت کی روح کی نفی کرکے 76سالہ چیئرمین نیب کو توسیع دینے کی کوشش کی جا رہی ...
جمہوریت کی روح کی نفی کرکے 76سالہ چیئرمین نیب کو توسیع دینے کی کوشش کی جا رہی ہے ، شاہد خاقان عباسی 

  

اسلام آباد ( ڈیلی پاکستان آن لائن) مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما اور سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ حکومت کی کوشش ہے کہ قانون کو تبدیل اور جمہوریت کی روح کی نفی کر کے 76 سالہ چیئرمین نیب کو توسیع دی جائے ۔

اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ ملک کی حقیقت یہ ہے کہ حکومتی وزراء کہتے ہیں ہم نیب چلاتے ہیں ، کیا اس حکومت میں ہمت ہے کہ وہ قانون کو بدل کر ایک شخص کو توسیع دیں ، یہ کون سی دنیا کی جمہوریت میں ہوتا ہے ، قانون کہتاہے کہ احتساب کا نظام غیر متنازعہ بنانے کیلئے چیئرمین نیب کو مشاورت  سے چنا جاتا ہے ،  اپوزیشن اور حکومت کی مشاورت سے چیئرمین نیب لگتا ہے ۔

سابق وزیر اعظم نے کہا کہ چیئرمین نیب کی مدت ملازمت میں توسیع نہیں ہو سکتی ، موجودہ چیئرمین نیب کی ملازمت کے 10 روز رہ گئے ہیں مگر  مشاورت کا عمل شروع بھی نہیں کیا جا سکتا ۔شہباز شریف اور فیملی کے خلاف حکومت اور نیب جو کیس لندن میں لے کر گئی تھی آج دوپہر  کو پریس کانفرنس میں اس کے فیصلےپر بات کریں گے ۔

محمد زبیر کی ویڈیو زسے متعلق شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ یہ بد نصیبی ہے کہ ملک کی سیاست یہاں پر پہنچ گئی ہے ، کسی پر الزام لگانا ہے تو پرچہ درج کرائیں ۔ 

مزید :

اہم خبریں -