لاہور سے اوکاڑہ آنے والی لڑکی کو رکشہ ڈرائیور اور اس کے ساتھیوں نے مبینہ اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا

لاہور سے اوکاڑہ آنے والی لڑکی کو رکشہ ڈرائیور اور اس کے ساتھیوں نے مبینہ ...
لاہور سے اوکاڑہ آنے والی لڑکی کو رکشہ ڈرائیور اور اس کے ساتھیوں نے مبینہ اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا

  

اوکاڑہ(ڈیلی پاکستان آن لائن)لاہور سے اوکاڑہ اپنے گھر واپس آنے والی لڑکی کو رکشہ ڈرائیور نے اپنے ساتھیوں کے ساتھ مل کرمبینہ اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا دیا۔ پولیس کی جانب سے واقعے میں ملوث تین ملزمان کو گرفتار کر لیاگیا ہے۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق پولیس حکام نے بتایا کہ متاثرہ لڑکی کے والد کی مدعیت میں تھانہ حجرہ شاہ مقیم میں واقعے کا مقدمہ درج کرلیاگیا ہے جس کے مطابق لڑکی نے بیان دیا کہ وہ گھر جانے کے لئے رکشے پر سوار ہوئی لیکن رکشہ ڈرائیور گھر پہنچانے کے بجائے ایک زمین دار کے ڈیرے پر لے گیاجہاں اس نے اپنے دیگر ساتھیوں کے ساتھ مبینہ زیادتی کا نشانہ بنایا۔

ایس ایچ او تھانہ حجرہ نے بتایا کہ میڈیکل رپورٹ میں لڑکی کے ساتھ زیادتی ثابت ہوگئی ہے جبکہ 3 ملزمان کوبھی گرفتار کرلیا گیا ہے۔

مزید :

جرم و انصاف -علاقائی -پنجاب -اوکاڑہ -