افغانستان میں سابق مارشل اور سابق نائب صدر رشید دوستم کے زیرقبضہ گھر 17 سال بعد مالک کو واپس دے دیا گیا

افغانستان میں سابق مارشل اور سابق نائب صدر رشید دوستم کے زیرقبضہ گھر 17 سال ...
افغانستان میں سابق مارشل اور سابق نائب صدر رشید دوستم کے زیرقبضہ گھر 17 سال بعد مالک کو واپس دے دیا گیا
سورس: Facebook/@AbdulRashidDostum

  

کابل (ویب ڈیسک) طالبان نے افغان آرمی کے سابق مارشل اور سابق نائب صدر عبد الرشید دوستم کے زیر قبضہ کابل کے پوش علاقے میں گھر 17 سال بعد اصلی مالک کو واپس دلا دیا، عبد الرشید دوستم نے دارالحکومت کابل کے علاقے شیرپور میں رہائش اختیار کر رکھی تھی اور 17 سال سے پوش علاقے کے ایک گھر میں رہائش پذیر تھے۔

افغان میڈیا رپورٹس کے مطابق  مالک مکان کا کہنا ہے کہ رشید دوستم 17 سال سے گھر پر قابض تھا اور ان سالوں میں کرایہ بھی ادا نہیں کیا۔

جیو نیوز کے مطابق  خیال رہے کہ عبدالرشید دوستم کے کابل کے علاوہ شبرغان اور مزار شریف میں بھی پرتعیش گھر تھے جس پر اب طالبان کا قبضہ ہے۔مزار شریف پر طالبان کے قبضے کے بعد رشید دوستم فرار ہوگئے تھے تاہم اب تک واضح نہیں ہوسکا کہ ملک میں موجود ہیں یا بیرون ملک چلے گئے۔

مزید :

بین الاقوامی -