کراچی میں طوفانی بارشوں کی وجہ سے اربن فلڈنگ کا خطرہ

کراچی میں طوفانی بارشوں کی وجہ سے اربن فلڈنگ کا خطرہ
کراچی میں طوفانی بارشوں کی وجہ سے اربن فلڈنگ کا خطرہ

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن )محکمہ موسمیات نے پیش گوئی کی ہے کہ طوفانی بارشیں کراچی میں اربن فلڈنگ کا باعث بن سکتی ہیں، اس کے علاوہ بدین ،ٹھٹہ، حیدرآباد اور دادو سمیت لسبیلہ، سومیانی، اورماڑہ ،پسنی،گوادر،تربت اور جیوانی میں بھی طوفانی بارشوں کے باعث اربن فلڈنگ کا خطرہ ہے۔

محکمہ موسمیات نے ایڈوائزری جاری کردی ہے، جس کے مطابق ہوا کے کم دباو کا رخ بھارتی گجرات کی جانب ہے اور شدت والی مون سون ہوائیں سندھ میں داخل ہو رہی ہیں، 2 اکتوبر تک سندھ میں مون سون ہوائیں اثر انداز ہونے کا امکان ہے،کراچی، حیدرآباد، ٹھٹہ اور بدین میں آج سے 2 اکتوبر کے دوران بارشیں ہوسکتی ہیں۔

محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ میرپور خاص، تھرپارکر ، عمرکوٹ، سانگھڑ اور سندھ کے دیگر اضلاع میں بھی بارشوں کی پیش گوئی ہے، تیز ہواو¿ں اور گرج چمک کے ساتھ کہیں تیز اور کہیں موسلادھار بارش کا امکان ہے، بلوچستان کے مختلف اضلاع میں بھی 30 ستمبر سے 3 اکتوبرکےدرمیان بارشوں کا امکان ہے۔محکمہ موسمیات کے مطابق 30 ستمبر سے 3 اکتوبرکے دوران سمندر میں طغیانی اور کبھی انتہائی طغیانی رہنےکا امکان ہے ، اس لیے ماہی گیر 30 ستمبر سے 3 اکتوبر کے دوران سمندر میں جانے سے گریز کریں۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -