اے این پی مسلسل دہشت گردی کا شکار ، امیدواروں پر حملے ، دو کارکن جاں بحق ،12زخمی

اے این پی مسلسل دہشت گردی کا شکار ، امیدواروں پر حملے ، دو کارکن جاں بحق ...
 اے این پی مسلسل دہشت گردی کا شکار ، امیدواروں پر حملے ، دو کارکن جاں بحق ،12زخمی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

چارسدہ+نوشہرہ(مانیٹرنگ ڈیسک) عوامی نیشنل پارٹی پر دہشت گردانہ حملے پیر کو جاری رہے جن میں مجموعی طور پر دو کارکن جاں بحق اور 12زخمی ہو گئے ہیں۔سرڈھیری بازار میں عوامی نیشنل پارٹی کے انتخابی امیدوار کی گاڑی کے قریب دھماکے کے نتیجے میں ایک شخص جاں بحق جب کہ 12 افراد زخمی ہو گئے ہیں۔ایکسپریس نیوز کے مطابق دھماکا سرڈھیری بازار میں اے این پی کے صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی کے 17 کے امیدوار محمد احمدخان کلے کی عوامی رابطہ مہم کے دوران ہوا۔ دہشت گردوں نے ان کی گاڑی کو نشانہ بنایا تاہم وہ اس حملے میں محفوظ رہے۔دھماکے کے نتیجے میں 12 افراد زخمی بھی ہوئے جنہیں طبی امداد کیلئے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے جب کہ سیکیورٹی فورسز نے علاقے کوگھیرے میں لے لیا ہے۔ بم ڈسپوزل اسکواڈکے مطابق دھماکا خیزمواد موٹرسائیکل میں نصب تھا جسے ریمورٹ کنٹرول ڈیوائس کے ذریعے اڑایا گیا۔ بی ڈی ایس کا کہنا ہے کہ دھماکے میں 4 سے 5 کلو بارودی مواد استعمال کیا گیا۔ اس سے پہلے نوشہرہ میںعوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی اسمبلی کے امیدوار کے انتخابی دفتر پر فائرنگ سے ایک شخص جاں بحق اور دوزخمی ہوگئے۔ صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی کے 13سے عوامی نیشنل نیشنل پارٹی کے امیدوار شاہد خان نے بتایاکہ نامعلوم افراد اُن کے انتخابی دفتر میں گھسے اور گارڈ سے بندوق چھین کر فائرنگ شروع کردی جس کے نتیجے میں ایک کارکن جاں بحق ہوگیا۔

مزید : چارسدہ /Headlines