نادہندگان ہونے پر پارلیمنٹ ہاﺅس وزیراعظم سیکرٹریٹ متعدد ادروں کے گیس کنکشن منقطع

نادہندگان ہونے پر پارلیمنٹ ہاﺅس وزیراعظم سیکرٹریٹ متعدد ادروں کے گیس کنکشن ...

                               لاہور(خبر نگار) سوئی ناردرن گیس پائپ لائنز نے واجبات کی عدم ادائیگی پر وزیر اعظم ہاو¿س اسلام آباد، پارلیمنٹ لاجز اور وفاقی شرعی عدالت سمیت کئی سرکاری اداروں کے گیس کنکشن کاٹ دیئے۔سوئی ناردرن گیس پائپ لائنز کے ترجمان کے مطابق وزیراعظم سیکریٹریٹ 47لاکھ روپے، پارلیمنٹ ہاو¿س 13لاکھ روپے، پارلیمنٹ لاجز اسلام آباد 7 لاکھ 70 ہزار روپے، وفاقی شرعی عدالت 2لاکھ 24 ہزار روپے اور گورنر ہاو¿س مری ایک لاکھ 88 ہزار روپے کا نادہندہ ہے، نادہندہ اداروں کو واجبات کی ادائیگی کے لئے کئی مرتبہ نوٹس جاری کئے گئے تاہم ادائیگی نہ ہونے پر یہ اقدام اٹھایا گیا۔واضح رہے کہ وزیر اعظم نواز شریف نے سرکاری حکام کو بجلی اور گیس کے واجبات کی وصولی کے لئے تمام سرکاری و غیر سرکاری اداروں اور صارفین کے خلاف بلا امتیاز اقدامات کا حکم دے رکھا ہے۔ احکامات کے پیش نظر ایم ڈی سوئی ناردرن گیس کمپنی عارف حمیدنے فوری طور پر سرکاری و غیر سرکاری نادہندگان کے کنکشن منقطع کرنے کے عمل کو مزید تیزکرنے کے احکامات جاری کر دیئے۔ جس کے تحتشیخوپورہ ، ملتان ،راولپنڈی، گجرانوالہ ، پشاور، فیصل آباد، لاہور، گجرات، اسلام آباد ،بہاولپور ،سرگودھا ریجنز میں تقریباµ14کروڑ18 لا کھروپےکے کمرشل اور انڈسٹریل گیس بل نادہندگان کے کنکشن عدم ادائیگی کی بنیادپر منقطع کر دیے گئے ہیں۔جس میںشیخوپورہ ریجن کے2 ، ملتان ریجن1 ، راولپنڈی ریجن2 ، ، گجرانوا لہ ریجن 6 ،پشاورریجن5 ،فیصل آباد ریجن4 ،لاہور ریجن7 ، گجراتریجن 1 ، اسلام آباد ریجن2 ،بہاولپور ریجن1 ، سرگودھاریجن2میں مندرجہ ذیل نادہندہ صارفین کے کنکشن منقطع کئے گئےہیں۔جس کے تحتلاہور ریجن میں میسرز موبائل گیس پی ایس او کے ذمے4,657,524روپے،میسرز بوٹا انٹرپرائزز1,430,196روپے ، میسرز رائل فرنس259,436 روپے،نزاکت کلینڈرنگ223,672روپے،میسرز کراچی لیمینیٹس پرائیوٹ115,250روپے، محمد ارشد1,706,441روپے ،اصغر علی (پاکیزہ ملک) کے ذمے637,098روپے بقایا جاتا ہیں۔ اسی طرح گجرات ریجن میںنعیم اشرف بٹ کمپنی کے ذمے1,209,184روپے۔ اسلام آباد ریجن میںملک نصیر احمد کے ذمے973,477روپے ،محمد آصف503,758روپے بقایا جاتا جبکہ بہاولپور ریجن کے اسلام الدین کمپنی کے ذمے792,434روپے اور سرگودھا ریجن میں محمد اکبر خان610,290روپے،طاہر یونس531,391روپے کے بقایا جات ہیں۔ جبکہ شیخوپورہ ریجن میں میسر اتفاق سی این جی اسٹیشن43,379,065روپے،میسر سیہول فلنگ اسٹیشن6,428,387روپے۔ملتان ریجنمیںمیسر ایس کے پیپر مل28,323,188روپے۔ راولپنڈی ریجنفیول پاور سی این جی17,920,212روپے،محمد اسلم خان 922,694 روپے۔گوجرانوالہ ریجن میسرز ا لعصمت سی این جی اسٹیشن6,740,907روپے،میسرز نفیس سی این جی فلنگ 2,733,606روپے، میسرز ایویٹورز1,376,370روپے ،میسرز لیدرفیلڈ پرائیوٹ لمیٹڈ 1,097,540 روپے،افتخار احمد 872,929 روپے،ظفر اقبال824,755روپے۔پشاورریجن میسرز براق سی این جی اسٹیشن5,684,373روپے، عطااللہ جان2,372,262روپے، سجاد حسین 1,496,647روپے، میسرز شیراز انڈسٹریز پرائیوٹ لمیٹڈ1,314,763روپے، عمر رحمان 552,153روپے۔ فیصل آبادریجنمیسرز سی این جی اسٹیشن 4,966,159 روپے،میسرز جہانگیر ٹیکسٹائل انڈسٹریز508,158روپے، رمضان سائزنگ انڈسٹریز374,447روپے،میسرز الجامعہ سائزنگ 360,183 روپے بقایا جاتا ہیں جس پر کریک ڈاﺅن کرتے ہوئے ان صارفین کے گیس کنکشن منقطع کر دئیے گئے ہیں۔ ایم ڈی سوئی گیس کمپنی عارف حمید نے بتایا کہ گیس کمپنی کے نادہندگان کے خلاف آپریشن کا سلسلہ آج بھی جاری رہے گا اور گیس ڈیفالٹرز سے ایک ایک پائی وصول کی جائے گی، جبکہ اس کے ساتھ ساتھ گیس چوری کے خلاف الگ سے کریک ڈاﺅن کرنے کا حکم دے رکھا ہے۔

مزید : صفحہ آخر