کراچی، ایف سی کالونی میں مدرسے پر دستی بم سے حملہ، بچے جاں بحق،16زخمی

کراچی، ایف سی کالونی میں مدرسے پر دستی بم سے حملہ، بچے جاں بحق،16زخمی

 کراچی ( اے این این ) کراچی کے علاقے ایف سی کالونی میں مدرسے پر مسلح افراد کا دستی بم حملہ ٗ3بچے جاں بحق ٗ16زخمی ہوگئے ٗ جاں بحق ہونے والے بچوں کی عمریں 5 سے 8 سال کے درمیان ہیں ٗ سکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے کر شواہد اکٹھے کرلئے ٗ زخمیوں اور لاشوں کو عباسی شہید ہسپتال منتقل کردیاگیا ۔ تفصیلات کے مطابق دہشت گردوں نے شہر قائد کو ایک مرتبہ پھر لہولہان کردیا ۔ پیر کو نامعلوم موٹر سائیکل سوار مومن آباد پولیس اسٹیشن کی حدود میں فرنٹئیر کالونی میں واقع جامع مسجد طاہریہ مدرسے میں دستی بم پھینک کر فرار ہوگئے، دھماکا اس قدر شدید تھا کہ اس کی آواز دور دور تک سنی گئی۔ دھماکے سے مدرسے کی دیوار کو بھی نقصان پہنچا جبکہ کئی قریبی عمارتوں کے شیشے ٹوٹ گئے۔ دھماکے کے نتیجے میں مدرسے میں زیر تعلیم 3 بچے جاں بحق جبکہ 16 زخمی ہوگئے ، دھماکے کے فوری بعد زخمیوں کو اپنی مدد آپ کے تحت عباسی شہید اسپتال منتقل کردیا گیا جہاں طبی عملے نے 3بچوں کے جاں بحق ہونے کی تصدیق کردی جبکہ 11کو طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔ جاں بحق ہونے والے بچوں میں 2کی شناخت عمر خان اور سلیمان سے ہوئی۔ پولیس اور سکیورٹی اداروں کے اہلکاروں نے جائے واقعہ کو گھیرے میں لے کر شواہد اکٹھے کرنے شروع کر دیئے ہیں۔ ہسپتال حکام کا کہنا ہے کہ جاں بحق ہونے والے بچوں کی عمریں 5سے 8سال کے درمیان ہیں ۔واضح رہے کہ گزشتہ جمعے کو دہلی کالونی میں بھی ایک مسجد کے قریب دھماکا ہوا تھا جس میں 6 افراد جاں بحق جبکہ متعدد زخمی ہو گئے تھے۔

مزید : صفحہ اول