مفت تعلیم کے منصوبوں میں شفافیت برقرار رکھنا اولین ترجیح ہے،طارق محمود

مفت تعلیم کے منصوبوں میں شفافیت برقرار رکھنا اولین ترجیح ہے،طارق محمود

  

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)پیف پارٹنر سکولوں کی باقاعدہ مانیٹرنگ کا مقصد معیاری تعلیم کے محرکات سے سکول مالکان کو آگاہ کرنا ہے تاکہ وہ ان پر عمل پیر ا ہو کر عام عوام میں تعلیم کی افادیت اور اہمیت کے جذبات کو اجاگرہو سکیں۔اس کے ساتھ ساتھ مانیٹرنگ کے دوران مفت تعلیم کے منصوبوں میں شفافیت کو برقرار رکھنا اولین ترجیح ہے ۔یہ بات مینجنگ ڈائریکٹر پنجاب ایجوکیشن فاؤنڈیشن طارق محمود نے اپنے دفتر میں پیف تعلیمی منصوبوں کے سربراہان کے ساتھ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی۔ایم ڈی پیف نے کہا کہ پیف پارٹنر سکولوں میں داخل تمام بچوں کی فیس ادا کی جا رہی ہے لہٰذا سکول مالکان طلباء سے فیس یا کسی مد میں پیسے وصو ل نہیں کر سکتے۔اسی طرح سکول کی حدو د میں کاروباری سرگرمیوں کی بھی اجازت نہیں ہے۔

جیسا کہ سکول مالک کا کنٹین چلانایا سکول یونیفارم،بیجز اور سٹیشنری فروخت کرنے کی بھی سخت ممانعت ہے۔

انہوں نے کہا کہ کمرہ جماعت کی عدم دستیابی ،عمارت کے خستہ حال کمروں،رائٹنگ بورڈ کا دستیا ب یامناسب ہونا،سکول کے بچوں سے صفائی کر وانا،سکول میں صفائی نہ کروانا اور سکول کے باہر مطلوبہ معیار کے مطابق پیف بورڈ کا نہ ہونا پیف قواعد کی خلاف ورزی ہے۔انہوں نے مزیدکہا کہ تمام طلباء واساتذہ کے لیے مناسب فرنیچر مہیا کیا جائے ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -