ورلڈ سیفٹی ڈے پر آگاہی واک،سیمنار کا انعقاد

ورلڈ سیفٹی ڈے پر آگاہی واک،سیمنار کا انعقاد

  

ملتان(وقائع نگار)پنجاب ایمرجنسی سروس ریسکیو1122ملتان نے ورلڈ سیفٹی ڈے کے موقع پر آگاہی واک اور سیمینار کا انعقاد کیا۔جس کا مقصد لوگوں کو اس بات کی آگاہی دینا تھا کہ احتیاط کو اپنی زندگی کا لازمی جزو بنالیں اور سیفٹی کے اصولوں پر عمل کرکے محفوظ معاشرے کے قیام میں (بقیہ نمبر43صفحہ12پر )

اپنا فرض ادا کریں۔ہر شعبہ ہائے زندگی سے تعلق والے خواتین وحضرات اور بچے اپنے شعبے اور کام کے اعتبار سیفٹی اصولوں پر عمل درآمد کریں اور انہیں اپنی زندگی کا اہم حصہ بنالیں۔ریسکیو سینٹرل اسٹیشن کانفرنس روم میں ایک سیمینار منعقد کیا گیا جس میں ریسکیورز’ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ کے سینئر ڈاکٹر’سول ڈیفنس’ووکیشنل انسٹیٹیوٹ خانیوال روڈ’سول سوسائٹی سے معززین کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔سٹیج سیکرٹری کے فرائض ایمرجنسی میڈیکل ٹیکنیشن محمد زاہد نے سرانجام دئیے سیمینار کا آغاز تلاوت قرآن پاک سے ہوا۔سیمینار کی صدارت ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ڈاکٹر کلیم اللہ نے کی۔ڈاکٹر برھان پاشا نے سیفٹی کی اہمیت اور ضرورت پر سیر حاصل گفتگو کی۔سرکاء میں ایمرجنسی آفیسر ڈاکٹر خالد محمود،ایمرجنسی آفیسر انجینئر احمد کمال،کنٹرول روم انچارج محمد مدثر ضیاء،ریسکیو اینڈ سیفٹی آفیسر محمد آفتاب،ریسکیو1122ملتان کے تمام اسٹیشن انچارجز چوک کمہارانوالہ سے محمد امجد،کلمہ چوک سے عثمان رفیق،بہاولپور بائی پاس چوک سے حامد محمود،انڈسٹریل اسٹیٹ ریسکیو اسٹیشن سے نعیم عمران ارشاد اور سلطان فاؤنڈیشن ریسکیو اسٹیشن سے محمد طارق سندیلہ،تحصیل شجاعباد سے نوشیروان عادل اور محمد قاسم نے شرکت کی۔واک کا آغاز ریسکیو سینٹرل اسٹیشن چوک کمہارانوالہ سے ہوا جو مدنی چوک پر اختتام پذیر ہوئی۔واک کے شرکاء نے سیفٹی سے متعلق بینرز اور چارٹ اٹھا رکھے تھے۔واک کی قیادت ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر،ڈاکٹر کلیم اللہ،سول سوسائٹی اور ریسکیورز نے بھرپور شرکت کی اور بعد میں ریسکیو زندہ باد،ہم ہیں ریسکیو کے نعروں کے ساتھ اختتام کیا۔اس موقع پر ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ڈاکٹر کلیم اللہ نے کمیونٹی کو چند پیغام دیتے ہوئے کہا کہ سیفٹی وہ درس ہے جو ہر انسان ہوش میں آنے کے بعد پہلی درسگاہ ماں سے سیکھتا ہے اور بڑے ہوکر ہو جس بھی شعبہ ہائے زندگی سے وابستہ ہوتا ہے اسے اپنے کام سے متعلق سیفٹی کے اصولوں پر سختی سے عملدرآمد کرنا اس کی اپنی اور قریبی ورکرز،دوستوں اور فیملی کے افراد کی حفاظت کیلئے بہت ضروری ہے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -