پنجاب فوڈ اتھارٹی نے برف کے کارخانوں کے لیے نئی ہدایات جاری کر دیں، 8مئی کی ڈیڈ لائن مقرر

پنجاب فوڈ اتھارٹی نے برف کے کارخانوں کے لیے نئی ہدایات جاری کر دیں، 8مئی کی ...
پنجاب فوڈ اتھارٹی نے برف کے کارخانوں کے لیے نئی ہدایات جاری کر دیں، 8مئی کی ڈیڈ لائن مقرر

  

لاہور( ڈیلی پاکستان آن لائن )صحتمند پنجاب پروگرام کے تحت عوام کو صحت مند اور معیاری اشیاء خوردونووش کی فراہمی یقینی بنانے کے لیے پنجاب فوڈ اتھارٹی نے برف کے کارخانوں کے لیے 8مئی کی ڈیڈ لائن مقرر کرتے ہوئے تفصیلی ہدایات جاری کر دیں ہیں۔

ڈائریکٹر جنرل کے دفتر سے جاری کردہ ہدایات کے مطابق مقررہ مدت ختم ہونے تک تمام برف کارخانہ مالکان لائسنس حاصل کر لیں۔ ڈیڈ لائن گزرنے کے بعد بغیر لائسنس کام کرنے والی فیکٹریوں کو سیل کر کے ان کے خلاف قانونی کاروائی ہو گی ۔ برف بنانے میں پنجاب فوڈ اتھارٹی سے منظور شدہ آر او فلٹر کا صاف ستھرا پانی استعمال کیا جائے۔ برف بنانے میں استعمال ہونے والے پانی کے ماہانہ ٹیسٹ کروا کران کاواضح ریکارڈ مرتب کیا جائے۔ برف کو جلدی جمانے کے لیے کسی قسم کا کیمیکل یا مضر صحت اجزاء استعمال نہ کیے جائیں۔ جاری کردہ ہدایات میں واضح کیا گیا ہے کہ برف بنانے والی تمام مشینری صاف ستھری اور زنگ سے پاک ہواوربرف منتقل کرنے والی گاڑیاں صاف ستھری اور حفظان صحت کے اصولوں کے عین مطابق ہوں۔ نا صرف پرووڈکشن ایریا صاف ستھرا اور حشرات وغیرہ سے محفوظ ہو بلکہ مزدوروں کے میڈیکل ٹیسٹ موقع پر موجود ہوں۔ علاوہ ازیں مزدوروں کے نہانے، کپڑے بدلنے کا انتظام پروڈکشن ایریا سے الگ کیا جائے ۔ اس حوالے سے ڈی جی فوڈ اتھارٹی نورالامین مینگل کا کہنا تھا کہ گرمیاں شرعوع ہوتے ہی برف بنیادی خوراک کا حصہ بن جاتی ہے اور اس کا استعمال ایسے طبقے میں کثرت سے ہوتا ہے جو حفظان صحت کے اصولوں سے زیادہ آگاہ نہیں ہوتے, ناقص برف کے استعمال سے ہیضہ ، پیٹ کی خرابی حتیٰ کہ یرقان جیسی بیماریاں پیدا ہوتی ہیں۔ پنجاب فوڈ اتھارٹی برف سمیت خوراک سے منسلک تمام اشیاء پر کڑی نظر رکھ رہی ہے اور صاف ستھری اشیاء خوردونوش کی بنیادی سظح پر فراہمی یقینی بنائی جائے گی تاکہ عام آدمی کی زندگی سے بیماریوں کا بوجھ کم کیا جا سکے۔

مزید :

لاہور -