کراچی میں گندم اور آٹے کی دستیابی اور قیمتوں میں بحران اٹھنے کا خدشہ

    کراچی میں گندم اور آٹے کی دستیابی اور قیمتوں میں بحران اٹھنے کا خدشہ

  

کراچی(این این آئی) شہرقائد میں گندم اور آٹے کی دستیابی اور قیمتوں میں بحران اٹھنے کا خدشہ ہے، فلور ملزایسوسی ایشن نے گندم کی ترسیل میں رکاوٹ کے بعد گندم اور آٹے کی قلت کا امکان ظاہر کر دیاہے۔تفصیلات کے مطابق شہر قائد میں لاک ڈاؤن اور کورونا کے سبب غذائی اجناس، دالوں،چاول اور گندم کے بحران کا خدشہ پیدا ہوگیاہے، پاکستان فلورملز ایسوسی ایشن نے کہا کہ سندھ کی فلورملزکوگندم کی قلت کاسامناہے، سیکریٹری خوراک سندھ کے واضح احکامات کے باوجود گندم کی ترسیل میں رکاوٹیں برقرار ہیں۔خالدمسعودنے کہاکہ دفعہ 144 کی آڑ میں نوشہروفروز نواب شاہ گھوٹکی محراب پور لاڑکانہ میں گندم کی ترسیل روکی جارہی ہے، گندم کی ترسیل میں رکاوٹ سیآئندہ2دن میں 20فلورملیں بندہوجائیں گی، قلت کیباعث 100کلوگندم کی قیمت 300روپیبڑھ کر3800روپے ہوگئی ہے۔انھوں نے کہا کہ آئندہ72گھنٹوں میں گندم کی ترسیل میں رکاوٹیں دور نہ کی گئی تو تمام فلورملیں بند ہو سکتی ہیں، کراچی کی 73ملوں کی یومیہ 65 سے70 ہزار گندم کی بوریوں کی کھپت ہے، دفعہ 144کیتحت گندم کی بین الصوبائی ترسیل پرپابندی ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -