کورونا وائرس، یہ کام نہ ہواتو جنوبی ایشیا کو بحران کا سامنا ہوسکتا ہے، اقوام متحدہ نے خبردار کردیا

کورونا وائرس، یہ کام نہ ہواتو جنوبی ایشیا کو بحران کا سامنا ہوسکتا ہے، اقوام ...
کورونا وائرس، یہ کام نہ ہواتو جنوبی ایشیا کو بحران کا سامنا ہوسکتا ہے، اقوام متحدہ نے خبردار کردیا

  

نیویارک(ڈیلی پاکستان آن لائن)کورونا وائرس کی وجہ سے دنیا بھر میں معاملات زندگی منجمد ہوچکے ہیں ۔ خصوصا جنوبی ایشیا کے بازاروں اور عوامی مقامات کے ساتھ ساتھ ہسپتال بھی دیگر مریضوں کیلئے بند پڑے ہیں ایسے میں نومولود بچوں کی حفاظتی ویکسین کاعمل رک چکا ہے جو کہ انتہائی تشویشناک بات ہے۔

اقوام متحدہ نے خبردار کیا ہے کہ اگر بچوں کو حفاظتی ویکسین نہ دی گئی تو جنوبی ایشیا میں ایک نیا بحران پیدا ہوسکتا ہے۔

ڈان اخبار میں شائع فرانسیسی خبررساں ادارے ' اے ایف پی' کی رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ نے خدشات کا اظہار کیا ہے کہ نووول کورونا وائرس کے باعث خطے میں صحت سے متعلق مشکل سے حاصل کیے گئے فوائد ختم ہوسکتے ہیں۔

اقوام متحدہ کے ادارے بین الاقوامی چلڈرن ایمرجنسی فنڈ (یونیسیف) نے کہا کہ جنوبی ایشیا میں لاک ڈاؤن کے باعث معمول کے حفاظتی ٹیکوں کی مہمات رک گئی ہیں اور وائرس کے خوف سے والدین اپنے بچوں کو ڈاکٹر کے پاس لے جانے سے انکاری ہیں جس کی وجہ سے لاکھوں بچوں کی زندگیوں کو خطرات لاحق ہیں۔

مزید :

کورونا وائرس -