رمضان المبارک کے دوران مسجد الحرام میں نمازیں کس طرح ادا کی جارہی ہیں؟ تصاویر سامنے آگئیں

رمضان المبارک کے دوران مسجد الحرام میں نمازیں کس طرح ادا کی جارہی ہیں؟ ...
رمضان المبارک کے دوران مسجد الحرام میں نمازیں کس طرح ادا کی جارہی ہیں؟ تصاویر سامنے آگئیں

  

مکہ مکرمہ(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان میں کورونا وائرس کا پھیلاﺅ روکنے کے حوالے سے مساجد میں سماجی فاصلے کی پابندی لاگو کرنے پر بہت کچھ لے دے ہو رہی ہے۔ اب بیت اللہ کے سامنے نماز ادا کرنے کی کچھ تصاویر سامنے آ گئیں ہیں، کہ شاید ہم ان سے ہی کچھ سبق حاصل کر لیں۔ میل آن لائن کے مطابق ان تصاویر میں دیکھا جا سکتا ہے کہ لگ بھگ دو درجن افراد مسجدالحرام میں نماز ادا کر رہے ہوتے ہیں اور ان میں بھی ہر نمازی کے درمیان کئی فٹ کا فاصلہ ہوتا ہے۔ باقی پوری مسجد الحرام، جہاں کورونا وائرس سے پہلے کے دنوں میں تل دھرنے کی جگہ نہیں ہوتی تھی، اب خالی پڑی ہے۔

رپورٹ کے مطابق مکہ مکرمہ میں حکومت نے کورونا وائرس کا پھیلاﺅ روکنے کے لیے لاک ڈاﺅن کر رکھا ہے جس میں ایک لمحے کی تخفیف بھی نہیں کی جاتی۔ دن کے چوبیس گھنٹے اور ہفتے کے سات دن کرفیو نما لاک ڈاﺅن جاری ہے اور انتہائی ضرورت کے وقت گھر کے کسی ایک فرد کو باہر نکلنے کی اجازت ہے۔ مساجد میں بھی باجماعت نماز کی اجازت نہیں ہے، مساجد کے عملے کے لوگ ہی سماجی فاصلے کی پابندی کی پاسداری کرتے ہوئے مساجد میں باجماعت نماز ادا کر رہے ہیں۔ یہی طریقہ مسجد الحرام میں بھی اختیار کیا جا رہا ہے۔ ملک کے کئی علاقوں میں سعودی حکومت نے مرحلہ وار لاک ڈاﺅن ختم کرنا شروع کر دیا ہے لیکن حکام کا کہنا ہے کہ مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں لاک ڈاﺅن برقرار رہے گا۔

دنیا کے لگ بھگ سبھی مسلم ممالک میں کورونا وائرس کا پھیلاﺅ روکنے کے لیے لوگوں کو گھروں میں نماز پڑھنے کا پابند کیا گیا ہے اور ہر مسلم ملک میں کم و بیش یہی طریقہ اپنایا گیا ہے جو سعودی عرب میں اپنایا جا رہا ہے۔ صرف ایک مسلم ملک پاکستان ہے جس میں کئی طرح کے کاروبار بھی کھلے ہیں اور مساجد میں بھی باجماعت نماز کی ’مشروط‘ اجازت دی گئی ہے۔

مزید :

عرب دنیا -