ڈاکٹروں عاصم کی گرفتاری سے قبل مجھے نہیں بتایا گیا،ایف آئی اے 2دن میں سندھ سے واپس چلی جائے ،قائم علی شاہ

ڈاکٹروں عاصم کی گرفتاری سے قبل مجھے نہیں بتایا گیا،ایف آئی اے 2دن میں سندھ سے ...

کراچی (آئی این پی،آن لائن،ما نیٹر نگ ڈیسک ) وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے مطالبہ کیا ہے کہ ایف آئی اے 2دن میں سندھ سے واپس چلی جائے، وزیراعظم نے کراچی آپریشن کی ذمہ داری مجھے سونپی ہے، کیا بدعنوانی صرف سندھ میں ہے اور کہیں نہیں؟ ڈاکٹر عاصم کی گرفتاری سے قبل مجھے نہیں بتایا گیا، ڈاکٹر عاصم کی گرفتاری سندھ پر حملہ ہے، سندھ میں بدانتظامی پیدا کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے، مجھے افسوس ہے میری قیادت نے ڈاکٹر عاصم کی گرفتاری پر مجھے ذمہ دار ٹھہرایا، نیب سندھ میں بھی فعال ہے۔ وہ جمعہ کو شاہراہ فیصل پر مہران انڈر بائی پاس کا افتتاح کرنے کے بعد میڈیا سے گفتگو کر رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ اگر دہشت گردی صرف کراچی میں نہیں پورے ملک میں ہے تو کیا بدعنوانی پھر صرف سندھ میں ہے، جہاں پر ہمارے رہنماؤں کو بغیر بتائے گرفتار کیا جا رہا ہے، کیا یہ جنگل کا قانون ہے جسے دل چاہے پکڑ لیا۔ انہوں نے کہا کہ ڈاکٹر عاصم ایک دن پہلے ملے، میں نے انہیں کھانا کھلایا لیکن دوسرے دن مجھے نہیں معلوم انہیں حراست میں لے لیا گیا، ان کی گرفتاری پر ڈی جی رینجرز اور کور کمانڈر کراچی سے بات کی ہے ، ڈی جی رینجر میرے انڈر کام کر رہے ہیں، ڈاکٹر عاصم کو پکڑنے سے پہلے مجھے بتانا چاہیے تھا، میری لیڈر شپ نے مجھے ذمہ دار ٹھہرایا جس کا بہت افسوس ہوا انہوں نے کہاکہ صوبائی معاملات میں مداخلت کرنا ایف آئی اے کا کام نہیں۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم نے کرپشن ختم کرنے کی ذمہ داری مجھے سونپی ہے، اس قسم کی کوتاہیوں کا سدباب کیا جائے گا، وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ میں نے وزیراعظم سے بھی کہا ہے کہ آپ نے کیوں سندھ پر حملہ کیا ہے جبکہ آپ نے آپریشن کی ذمہ داری مجھے سونپی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آصف زرداری کی طبیعت ٹھیک نہیں وہ ضرور وطن واپس آئیں گے، میں منتخب نمائندہ ہوں، کابینہ میرے ساتھ ہے۔ علاوہ ازیں ڈی جی رینجرز سندھ میجر جنرل بلال اکبر نے وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ سے وزیر اعلیٰ ہاوس میں ملاقات کی۔ ملاقات میں صوبے میں امن و امان کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ترجمان وزیر اعلیٰ ہاوس کے مطابق ملاقات میں جرائم پیشہ افراد کے خلاف جاری ٹارگٹڈ آپریشن پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ اپیکس کمیٹی، صوبے کی سیاسی اور امن و امان کی صورتحال پر بھی تفصیلی بات چیت کی گئی

کراچی (خصو صی رپورٹ، ما نیٹرنگ ڈیسک) سندھ کے وزیر اطلاعات نثار کھوڑو نے کہا کچھ قوتیں سندھ میں پیپلزپارٹی کی حکومت دیکھنا نہیں چاہتیں ، سینیٹر تاج حیدر کا کہنا ہے کہ نواز شریف اوچھے سیاسی ہتھکنڈوں پر اترآئے ہیں۔سندھ کے وزیر اطلاعات نثار کھوڑو کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ ماضی کی روش کو دہرانے کی کوشش کی تو نتائج خراب نکلیں گے ، صرف سندھ میں کرپشن کے خلاف کاروائیاں درست نہیں۔نثار کھوڑو نے کہا کہ کچھ قوتیں سندھ میں پیپلز پارٹی کی حکومت دیکھنا نہیں چاہتیں ، اب نواز شریف کے لئے امتحان ہے کہ وہ اپنے بھائی کی حکومت پر ہاتھ ڈالتے ہیں یا نہیں۔دوسری طرف سینیٹر تاج حیدر نے بھی نوازشریف کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہ وہ اوچھے سیاسی ہتھکنڈوں پر اتر آئے ہیں

مزید : صفحہ اول