بلاول بھٹو زرداری سے ملاقات میں جیالوں کی سابق وزراء اعظم پر تنقید

بلاول بھٹو زرداری سے ملاقات میں جیالوں کی سابق وزراء اعظم پر تنقید

لاہور(شہزاد ملک سے) چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری سے بلاول ہاؤس اسلام آباد میں ملاقات کے دوران پیپلز پارٹی لاہور کے جیالے کارکنان پارٹی کے سابق وزراء اعظم اور سابق وزراء کے خلاف پھٹ پڑے اور کہا کہ آج پیپلز پارٹی کو جو ناکامیاں ملی ہیں اس کے ذمے دار بھی یہی لوگ ہیں کیونکہ دوران حکومت یہ لوگ پیپلز پارٹی لاہور کی تنظیم پر توجہ دینے کی بجائے دوسری جماعتوں پر نوازشیں کرتے رہے اور آج وہی لوگ ان کے خلاف کاروائیاں کررہے ہیں ۔ذونل صدر ضرار یوسف نے لطیف کھوسہ کے ساتھ نونک جھونک کی ‘ سیکرٹری اطلاعات فیصل میر نے بھی اپنے حلقے میں مداخلت کا شکوہ کیا ،بعض جیالوں نے بلدیاتی الیکشن اکیلے لڑنے اور بعض جیالوں نے دوسری جماعتوں کے ساتھ ملکر لڑنے کی تجویز دی‘ علماء ونگ لاہور کے صدر بدر منیر نے چیرمین کو اسلامی کتابوں اور تسبیح کا تحفہ دیا۔ ذرائع نے چیرمین بلاول بھٹو زرداری کے ساتھ پیپلز پارٹی لاہور کی تنظیم اور ٹکٹ ہولڈرز کی ملاقات کی اندرونی کہانی کے بارے میں پاکستان کو بتایا ہے کہ اس ملاقات میں سب نے کھل کر بات کی اور چیرمین نے سب کی باتوں کو سنا اور کہا کہ اگلے مرحلے میں وہ لاہور آئیں گے اور وہاں پر سب سے دوبارہ فرداََ فرداََ ملاقات کریں گے ۔ذرائع کے مطابق اجلاس میں شکیل میر چنی شہید زوالفقار علی بھٹو اور بے نظیر شہید کا زکر کرتے ہوئے آبدیدہ ہو گئے ذرائع کے مطابق زاہد علی شاہ نے چیرمین بلاول بھٹو سے کہا کہ آپ کو دوبارہ پیپلز پارٹی کو پاؤں پر کھڑا کرنے کے لئے خود میدان میں آنا ہوگا ۔ذرائع کے مطابق ضرار یوسف نے لطیف کھوسہ کو مخاطب کرتے ہوئے چیرمین سے کہا کہ یہ میرے زون میں مداخلت کرتے ہیں میں ان کے خلاف آپ کو درخواست دینا چاہتا ہوں جس پر لطیف کھوسہ نے کہا کہ میں نے آپکو سیکرٹری جنرل کی حیثیت سے معطل کیا تھا پھر بھی آپ یہاں موجود ہیں اگر میں مداخلت کرتا تو آپ یہاں نہ بیٹھے ہوتے ۔

جیالوں کی تنقید

مزید : صفحہ آخر