سیاہ فام شہریوں سے امتیازی سلوک کیخلاف امریکی فٹبال ٹیم کے کھلاڑی کا قومی ترانے کے احترام میں کھڑے ہونے سے انکار

سیاہ فام شہریوں سے امتیازی سلوک کیخلاف امریکی فٹبال ٹیم کے کھلاڑی کا قومی ...
سیاہ فام شہریوں سے امتیازی سلوک کیخلاف امریکی فٹبال ٹیم کے کھلاڑی کا قومی ترانے کے احترام میں کھڑے ہونے سے انکار

  

نیویارک(نیوز ڈیسک)امریکہ میں سیاہ فام شہریوں سے امتیازی سلوک پر امریکی فٹبال ٹیم کے کھلاڑی کولن کیپرنک نے میچ شروع ہونے سے قبل قومی ترانے کے احترام میں کھڑے ہونے سے انکار کردیا۔

امریکی میڈیا کے مطابق کولن کیپرنک سے جب قومی ترانے کی دھند پر کھڑے نہ ہونے کی وجہ معلوم کی گئی تو ان کا کہنا تھا کہ میں ایسے ملک کے ساتھ اپنی حب الوطنی کا اظہار کس طرح کروں جہاں لوگوں کے ساتھ رنگ کی بنیاد پر ظلم ہوتا ہے۔ امریکا میں تیزی سے پھیلنے والے نسلی تعصب کے خلاف اپنے جذبات کا اظہار کرنے کا اور کوئی طریقہ نہیں تھا۔ میچ سے قبل قومی ترانے کے احترام میں کھڑا ہونا حوصلہ افزا ہے لیکن ضروری نہیں میں ایسے قومی پرچم کی تعظیم میں کھڑا نہیں ہوسکتا جہاں پولیس رنگ کی بنیاد پر لوگوں کو گولیوں کا نشانہ بنائے۔ کولن کی ٹیم کے کوچ چیب کیلی نے بھی ان کی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ میں کولن کے ردعمل کی بھرپور حمایت کرتا ہوں ۔بحیثیت امریکی شہری کولن کو حق حاصل ہے کہ وہ قومی ترانے کے احترام میں کھڑا ہو یا بیٹھا رہے۔واضح رہے کہ 20 سال قبل امریکی فٹبال ٹیم کے کھلاڑی محمد عبدالرو¿ف کو قومی ترانے کے احترام میں کھڑا نہ ہونے پر ایک میچ کے لئے باہر کردیا گیا تھا۔28 سالہ کولن سیاہ فام امریکیوں کی حمایت میں چلائی جانے والی مہم ”بلیک لائیو میٹر” کی حمایت کا کئی بار باضابطہ اظہار کرچکے ہیں ۔

مزید :

کھیل -