غیر ملکی کمپنی کا خام تیل کی چوری میں ملوث ہونا تشویشناک ہے،میاں مقصود

غیر ملکی کمپنی کا خام تیل کی چوری میں ملوث ہونا تشویشناک ہے،میاں مقصود

  

لاہور(نمائندہ خصوصی)امیر جماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمد نے قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی میں کیے گئے انکشاف کہ ’’ایک غیر ملکی کمپنی کرک کے علاقے دادشاہ کی آئل فیلڈ سے کھربوں روپے کے خام تیل کی چوری میں براہ راست ملوث ہے‘‘پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہاہے کہ قائمہ کمیٹی کی تجاویز پر فوری عمل کرتے ہوئے ایف آئی اے اپنی انکوائری کو جلد ازجلد مکمل کرے۔اس جرم میں ملوث افراد کے خلاف اب تک100ایف آئی آر درج کی جاچکی ہیں مگر ذمہ داران کو گرفتار نہیں کیاجاسکا۔غیر ملکی کمپنی کے ذمہ داران اور آئل فیلڈزپرکام کرنے والے حکام کی ملی بھگت کے بغیر تیل چوری نہیں ہوسکتالہٰذاسب کو شامل تفتیش کیاجانا چاہئے۔انہوں نے کہاکہ ملک میں کرپشن کا ہر روزبڑے سے بڑا اسکینڈل سامنے آرہاہے مگر مجرمان کھلے عام دندناتے پھرتے ہیں انہیں کسی بھی قسم کاکوئی ڈرخوف نہیں۔برسراقتدار افراد اربوں کھربوں روپے ہضم کرتے جاتے ہیں اور ان کے سامنے قانون بے بس نظر آتاہے۔پانامالیکس نے بے شمارگھناؤنے چہروں کو بے نقاب کیاہے مگر بدقسمتی سے وزیراعظم نوازشریف اپنے آپ کوغیر مشروط طورپر احتساب کے لیے پیش کرنے کی باتیں کررہے تھے آج وہی نہیں چاہتے کہ ملک میں احتساب ہو۔ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت معاملے کو طول دینے کی کوششیں کی جارہی ہے۔میاں مقصود احمد نے مزیدکہاکہ جب تک ملک میں احتساب کابلاخوف،بے رحم اور بلاتفریق عمل شروع نہیں ہوتاتب تک پاکستان دنیا میں باعزت،بلندوبالااورپروقار مقام حاصل نہیں کرسکتا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -