حکومت ذاتی مفادات چھوڑ کر کالا با غ ڈیم تعمیرکرے،طارق فیروز

حکومت ذاتی مفادات چھوڑ کر کالا با غ ڈیم تعمیرکرے،طارق فیروز

  

لاہور(پ ر) انجمن تاجران لاہور کے صدر میاں طارق فیروز و جوائنٹ سیکرٹری میا ں سلیم نے کہا ہے کہ حکومت ذاتی مفادات چھوڑ کر کالا باغ ڈیم کی تعمیر شروع کرے ، انہوں نے کہا کہ کالا باغ ڈیم بنانا ناگزیر ہے آج مک کی 65فیصد انڈسٹری بند جبکہ ملکی معیشت کا جنازہ نکل چکا ہے ،حکومت ہر ماہ نئے نئے قرضے لے رہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ کالا باغ ڈیم اگر آج پروڈکشن میں ہوتا تو قوم کو 4.50 پیسے میں فی یونٹ دستیاب ہوتااور ملک آج انڈسٹریل اسٹیٹ بن چکا ہوتا۔کالا باغ ڈیم کے باعث حکومت کو نہ تو قرضہ لینا پڑتا اورنہ ہی آئی ایم ایف اور ورلڈبنک کے ہاں قوم کو گروی رکھنا پڑتا ،میاں سلیم نے کہا کہ چندمفاد پرست سیاستدانوں کی وجہ سے آج 20 کروڑ عوام ذلت کی زندگی گزارنے پر مجبور ہیں ۔ان مفاد پرست سیاستدانوں میں چند بھارت کی گود میں بیٹھ کر کالا باغ ڈیم کی مخالفت کر رہے ہیں جبکہ چند سرمایہ داروں نے اپنے آئی پی پیز اور رینٹل پاور پلانٹ منگوا کر عوام کی پیٹھ میں چھرا گھونپاہے ۔ انہوں نے کہا کہ آج ملکی معیشت اور انڈسٹری کو بچانے کا ایک راستہ ہے کہ فوری طور پر کالا باغ ڈیم کی تعمیر شروع کی جائے ۔انہوں نے کہا کہ کالا باغ ڈیم سے پچاس ہزار میگا واٹ بجلی حاصل کی جا سکتی ہے جس کا ریٹ ماہرین کے مطابق 4روپے 50 پیسے فی یونٹ ہوگا ،انہوں نے کہاکہ سستی بجلی سے ہم انڈیا اور چائنہ کی انڈسٹری کا مقابلہ کر سکیں گے ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -