جمہوریت مشاورت اور معاونت کا مرکب ہوتی ہے،میاں صدیق اکبر

جمہوریت مشاورت اور معاونت کا مرکب ہوتی ہے،میاں صدیق اکبر

  

راولپنڈی( نیوزرپورٹر) انجمن فیض الاسلام کے صدر محمد صدیق اکبر میاں نے کہا ہے کہ جمہوریت مشاورت اور معاونت کا مرکب ہوتی ہے مگر بدقسمتی کے ساتھ ہمارا مزاج جمہوری نہیں . ہمارے لوگ دوسروں کی رائے کا احترام کرتے اور نہ دوسری جمہوری اقدار کی پاسداری کرتے ہیں مگر اللہ تعالی کے فضل اور کرم سے بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح کے بنائے ہوئے ادارے انجمن فیض الاسلام میں یہ خوبیاں بدرجہ اتم موجود ہیں جو ایک رضا کار اور جمہوری تنظیم ہے اور اپنے مقاصد کماحقہ پورے کرنے کے ساتھ ایک فلاحی اور رفاعی تنظیم کے طور پر پاکستان کی وحدت و سلامتی کیلئے بھی نتیجہ خیز کام کر رہی ہے . انہوں نے ان خیالات کا اظہار انجمن کی جنرل کونسل کے سالانہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا جس میں انجمن کا مالی سال 2016-17 ء کا سالانہ بجٹ منظوری کیلئے پیش کیاگیا . سالانہ بجٹ کا کل حجم 16 کروڑ ، 4 لاکھ اور 67 ہزار روپے ہے . بجٹ پیشی کے بعد اس پر بحث ہوئی جس کے بعد جنرل کونسل نے اسے متفقہ طور پر منظور کر لیا . اس موقع پرانجمن کے سنئیر نائب صدر ڈاکٹر ریاض احمد ، نائب صدر انجنئیر عبدالرزاق ، فنانس سیکریٹری راجا صابر حسین ، جنرل سیکریٹری راجا فتح خان ، جوائنٹ سیکریٹری میجر (ر) بشارت احمد کیانی ، سیکریٹری نشر و اشاعت محمد بدر منیر اور کونسل کے اراکین موجود تھے . محمد صدیق اکبر میاں نے کہا کہ انجمن کے ساتھ وابستگی رکھنے والے تمام افراد ذاتی نمود و نمائش ، ذاتی انا اور مفاد سے بالاتر ہو کر کام کر رہے ہیں اور اپنی خدمات کا کوئی معاوضہ بھی نہیں لیتے . یہی وجہ ہے کہ ہمارے پیش رو حضرات کی بے لوث خدمات کے نتیجے میں انجمن فیض الاسلام آج ملک کا ایک ایسا ادارہ بن چکا ہے جس پر عوام اندھا اعتماد کرتے ہیں . اس موقع پر انجمن کے اراکین نے عوام الناس سے اپیل کی کہ وہ عید قربان کے موقع پر قربانی کی کھالیں انجمن فیض الاسلام کو عطیہ کریں تاکہ ادارے کے اخراجات پورے کرنے میں مدد مل سکے .

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -