’اگلے ایک ماہ کے دوران جو بھی پاکستان سے آئے گا پہلے اسے پکڑ کر یہ کام کروایا جائے گا‘ سعودی حکومت نے سخت فیصلہ کرلیا

’اگلے ایک ماہ کے دوران جو بھی پاکستان سے آئے گا پہلے اسے پکڑ کر یہ کام کروایا ...
’اگلے ایک ماہ کے دوران جو بھی پاکستان سے آئے گا پہلے اسے پکڑ کر یہ کام کروایا جائے گا‘ سعودی حکومت نے سخت فیصلہ کرلیا

  


ریاض(مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی عرب میں فریضہ حج کے لیے پہنچنے والے مسلمانوں کی لازمی ویکسی نیشن کروانے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔ اس سلسلے میں اعلان کیا گیا ہے کہ سعودی عرب پہنچنے والے ہر عازم حج کی سب سے پہلے ویکسی نیشن کی جائے گی اور پھر اسے ملک میں داخلے کی اجازت دی جائے گی۔ عرب نیوز کی رپورٹ کے مطابق سعودی وزارت حج کی طرف سے یہ مہم پہلی بار شروع کی جا رہی ہے، جس کے تحت اس بار عازمین حج کے لیے فلو و دیگر وبائی امراض سے بچاﺅ کی ویکسین لازمی قرار دی گئی ہے۔

”اگلے ایک ماہ کے دوران جس بھی غیرملکی نے یہ کام کیا، پکڑ کر فوری ملک سے ہمیشہ کیلئے نکال دیں گے“ سعودی حکومت نے واضح اعلان کردیا

وزارت صحت کے انڈرسیکرٹری عبداللہ اسیری نے اس امر کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ ”وزارت اس مہم پر عملدرآمد اور اس کی کامیابی کے لیے پوری طرح تیار ہے۔ ویکسین کی تقسیم کے لیے سنٹر قائم کر دیئے گئے ہیں اور مختلف ذرائع سے اس مہم کی تشہیر بھی کی جا رہی ہے۔ اس مہم میں عازمین حج کو فلو، پولیو اور دیگر امراض سے بچاﺅ کی ویکسین دی جائے۔ بالخصوص ایسے ممالک سے آنے والے عازمین کو یہ ویکسین دی جائے گی جہاں یہ امراض پائے جاتے ہیں۔ “

مزید : عرب دنیا