’اپنے اس آدمی کو فوراً واپس بلالو‘ بڑے اسلامی عرب ملک نے سعودی عرب کو خط لکھ دیا، یہ آدمی کون ہے؟ انتہائی حیرت انگیز خبر آگئی

’اپنے اس آدمی کو فوراً واپس بلالو‘ بڑے اسلامی عرب ملک نے سعودی عرب کو خط لکھ ...
’اپنے اس آدمی کو فوراً واپس بلالو‘ بڑے اسلامی عرب ملک نے سعودی عرب کو خط لکھ دیا، یہ آدمی کون ہے؟ انتہائی حیرت انگیز خبر آگئی

  

بغداد (مانیٹرنگ ڈیسک) عراق میں تعینات سعودی سفیر ثمر السبحان کے اس حالیہ انکشاف نے تہلکہ برپا کر دیا کہ انہیں عراق میں موجود ایرنی حمایت یافتہ شدت پسند گروہوں نے میزائلوں سے حملہ کرکے قتل کرنے کا منصوبہ بنارکھا تھا۔ اس بیان کے جواب میں عراقی حکومت نے بھی ایک بڑا قدم اٹھاتے ہوئے سعودی حکومت کو خط لکھ دیا ہے کہ وہ اپنے سفیر کو واپس بلالے۔

ویب سائٹ ریڈیو فری یورپ ریڈیو لبرٹی کی رپورٹ کے مطابق عراقی وزارت خارجہ کے ترجمان احمد جمال نے گزشتہ روز جاری کئے گئے ایک بیان میں کہا کہ سعودی سفیر کی واپسی کے لئے ان کے کچھ حالیہ بیانات کے بعد غوروخوض شروع کیا گیا۔ ان کا اشارہ مذکورہ بالا بیان کی جانب ہی تھا، جس میں سعودی سفیرنے یہ انکشاف بھی کیا تھا کہ ان کے قتل کے منصوبے کے بارے میں اطلاعات انہیں عراقی انٹیلی جنس ایجنسیوں کی جانب سے موصول ہوئیں۔ ان کے بیان میں یہ بھی کہا گیا کہ اس منصوبے کو ایران کی حمایت حاصل تھی، جو عراق اور دیگر عرب ممالک میں اصلاحی اقدامات کی راہ میں رکاوٹ ہے۔

مسلمانوں پر ظلم کے پہاڑ توڑنے والے سابق برطانوی وزیراعظم ٹونی بلیئر کی اپنی ہی قریبی ترین عزیزہ نے اسلام قبول کرلیا، ٹی وی اینکر نے پوچھا یہ کپڑے کیوں پہنتی ہو تو ایسا جواب دیا کہ سب کو چپ کروادیا

سعودی سفیر کے ان بیانات کو سنجیدگی سے لیتے ہوئے عراقی حکومت نے ان کی واپسی کا فیصلہ کردیا۔ عراقی وزارت خارجہ کے ترجمان کا کہنا تھا کہ سعودی سفیر کی جانب سے جاری کئے گئے بیانات بے بنیاد ہیں اور ان کی وجہ سے ایران اور عراق کے تعلقات متاثر ہو سکتے ہیں۔

واضح رہے کہ سعودی عرب اور عراق کے درمیان سفارتی تعلقات تقریباً 25 سال کی کشیدگی کے بعد گزشتہ سال دسمبر میں ہی بہتر ہوئے تھے۔ سعودی عرب نے 1990ءمیں عراق کے کویت پر حملے کے بعد عراق میں اپنا سفارتخانہ بند کردیا تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -