ماں کی درخواست پر پولیس نے 5بچوں کو عدالت پیش کر دیا

ماں کی درخواست پر پولیس نے 5بچوں کو عدالت پیش کر دیا

  

لاہور(نامہ نگار)ایڈیشنل سیشن جج ندیم اختر تبسم کی عدالت میں مناواں کی رہائشی یاسمین بی بی کی جانب سے 5بچوں کی بازیابی کے لئے دائردرخواست پرپولیس نے 5بچوں کو والد محمد عامرسمیت عدالت پیش کردیا۔ اڑھائی ماہ کا شیر خواربچہ عبد الہادی، ڈیڑھ سال کا معیز، 6 سالہ دعا، 7 سالہ فیضان اور 9 سالہ فریحہ کوعدالت میں پیش کیا گیا،فاضل جج نے دوران سماعت میاں اوربیوی کو کہا کہ بچوں کی خاطر سمجھوتہ کرلیں، چھوٹی چھوٹی شکایات کو بھول جائیں، مگر بیوی کا صلح سے صاف انکار کر دیا ،اس کا کہنا تھا خاوند تشدد کرتا ہے اب وہ اس کے ساتھ نہیں رہنا چاہتی بچے مجھے دیئے جائیں جس پر عدالت نے برہمی کا اظہار کیا اور کہا اپنے فیصلے کر دوبارہ غور کریں، عدالت آپ کو ایک ہفتہ کا وقت دے ری ہے جس کے بعد فاضل جج اڑھائی ماہ کے عبد الہادی اور ڈیڑھ سال کے معیز کوماں کے حوالے جبکہ 6 سالہ دعا، 7 سالہ فیضان اور 9 سالہ فریحہ کووالد کے حوالے کرنے کا حکم دیتے ہوئے مزید سماعت4 ستمبر تک ملتوی کردی ۔فاضل جج نے کہا کہ میاں بیوی کو سمجھوتہ کیلئے مہلت دی ہے اور یہ عارضی حکم ہے ،4 ستمبر تک صلح کر لیں اور بچوں کے ساتھ دوبارہ پیش ہوں۔

مزید :

علاقائی -