حوثی باغیوں کادبئی انٹر نیشنل ایئرپورٹ پر ڈرون حملے کا دعویٰ

حوثی باغیوں کادبئی انٹر نیشنل ایئرپورٹ پر ڈرون حملے کا دعویٰ

  

دبئی/صنعاء(آئی این پی )یمن میں برسر پیکار ایرانی حمایت یافتہ حوثی جنگجوں نے دبئی کے انٹر نیشنل ایئرپورٹ پر ڈرون حملہ کردیا،متحدہ عرب امارات ایوی ایشن اتھارٹی نے ڈرون حملے کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہوائی اڈے کے ٹرمنل 1 پر سپلائی پر متعین گاڑی کے ساتھ حادثہ پیش آیا تھا تاہم ہوائی اڈے پر کسی قسم کا کوئی ڈرون حملہ نہیں ہوا۔ بین الاقوامی میڈیا کے مطابق یمن میں برسر پیکار ایرانی حمایت یافتہ حوثی جنگجوں نے دبئی کے انٹر نیشنل ایئرپورٹ پر ڈرون حملہ کردیا۔ تفصیلات کے مطابق یمن میں برسر پیکار حوثیوں کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ ان کی راکٹ فورس نے متحدہ عرب امارات کی ریاست دبئی کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر ڈرون حملہ کیا ہے۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ حوثی جنگجوں کی جانب سے صمد 3 نامی ڈرون کے ذریعے پیرکی شام دبئی ایئرپورٹ حملہ کیا گیا ہے۔خیال رہے کہ اس سے قبل اسی ڈرون کے ذریعے 26 جولائی کو متحدہ عرب امارات کے دارالحکومت ابوظہبی پر بھی ڈرون حملہ کیا گیا تھا۔حوثی جنگجوں کے ترجمان کا کہنا تھا کہ فورسز کی جانب سے ان ممالک کے بنیادی ڈھانچوں کو نشانہ بنایا جارہا ہے جو یمن جنگ میں عرب اتحاد کا حصہ ہیں۔متحدہ عرب امارات ایوی ایشن اتھارٹی کا کہنا تھا کہ ہوائی اڈے کے ٹرمنل 1 پر سپلائی پر متعین گاڑی کے ساتھ حادثہ پیش آیا تھا تاہم ہوائی اڈے پر کسی قسم کا کوئی ڈرون حملہ نہیں ہوا۔اماراتی ایوی ایشن اتھارٹی کی جانب سے دعوی کیا گیا ہے کہ انٹر نیشنل ایئر پورٹ پر طیاروں کی آمد و رفت معمول کے مطابق جاری ہے، واضح رہے کہ متحدہ عرب امارات یمن جنگ میں سعودی عرب کا اہم اتحادی ہے۔

مزید :

علاقائی -