کشمیر بزنس ایکسپو 2018کا انعقاد ایک چیلنج تھا،خورشیداحمدعباسی

کشمیر بزنس ایکسپو 2018کا انعقاد ایک چیلنج تھا،خورشیداحمدعباسی

  

مظفرآباد( وقائع نگار خصوصی)کشمیر مارکٹینگ پرائیویٹ لمٹیڈکے ایم -ڈی خورشید احمد عباسی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ کشمیر بزنس ایکسپو 2018کا انعقاد ایک چیلنج تھا۔ آزاد کشمیر کے تاریخ کے سب سے بڑے ایونٹ کے انعقاد پرکشمیر مارکیٹنگ کی آرگنائزنگ ٹیم، ٹاپ مینجمنٹ، میڈیا پارٹنرز، سپانسرز، سٹال ہولڈرز،مظفرآباد اور کشمیر کی عوام مبارکباد کی مستحق ہیں۔انہوں نے کہا حکومتی سطح پر کشمیر بزنس ایکسپو کے انعقادکے لئے تعاون قابلِ دید ہے۔ صدر ریاست، وزیراعظم،ممبران اسمبلی،منسٹرز، ممبران کشمیر کونسل، بیوروکریٹس،اور انتظامی افسران نے بھرپور تعاون اور حوصلہ افزائی کی۔عوام کا جوش و خروش اورکاروباری طبقہ کی دلچسپی نے کشمیر بزنس ایکسپو کی کامیابی میں اہم کردار ادا کیا۔ کشمیر مارکٹینگ پرائیویٹ لمٹیڈمارچ 2019میں میرپور میں دوسرا کشمیربزنس ایکسپو منقعد کروائے گی۔آزاد کشمیر میں سرمایہ کاری کا فروغ کشمیر مارکٹینگ کی اولین ترجیح ہے۔ سرمایہ کاری کے فروغ سے ہی بیروزگاری کا خاتمہ ممکن ہے۔نئی نسل کو کا روبار کی طرف راغب کرنا ہو گا۔صرف سرکاری ملازمت پر انحصار سے نوجوان نسل میں احساس محرومی پیدا ہورہاہے۔ پرائیویٹ سیکٹر کی ترقی مسائل کے حل میں معاون ثابت ہو گی۔ جہاں سرمایہ کاری کو سہولیات دینے کے حوالے سے حکومتی سطح پر اقدامات کی ضرورت ہے وہاں حکومت کو قانون بھی وضع کرنا چائیے کہ سرمایہ کار آزاد کشمیر حکومت کو ٹیکس دیں، ریاستی لوگوں کو نوکریاں دیں اور آزاد کشمیر میں اداروں کو جواب دہ ہوں۔معاملات کو درست سمت میں چلانے کے لئے ضابطہ اخلاق طے کیا جائے۔آزاد کشمیر میں ٹو رازم انڈسٹری کا فرو غ اولین ترجیح ہونا چاےئے۔اس کے لیے آزاد کشمیر حکومت اقدامات کرے کشمیر مارکٹینگ ٹورازم کے فروغ کے لئے کوشاں ہے۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -