جانے سے پہلے مسلم لیگ ن کی حکومت ایسا کام کر گئی کہ اربوں کا نقصان ہو گیا، انتہائی دردناک خبر آ گئی

جانے سے پہلے مسلم لیگ ن کی حکومت ایسا کام کر گئی کہ اربوں کا نقصان ہو گیا، ...
جانے سے پہلے مسلم لیگ ن کی حکومت ایسا کام کر گئی کہ اربوں کا نقصان ہو گیا، انتہائی دردناک خبر آ گئی

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) مسلم لیگ ن کی حکومت نے بجلی کی لوڈشیڈنگ ختم کرنے کے لیے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کیے اور بجلی پیدا کرنے کے کئی منصوبے لگائے تاہم ان منصوبوں کے افتتاح میں ایسی جلدبازی کا مظاہرہ کیا گیا کہ قومی خزانے کو اربوں روپے کا نقصان اٹھانا پڑ گیا۔ ایکسپریس ٹربیون کے مطابق انڈسٹریل کنزیومرز کا کہنا ہے کہ ن لیگی حکومت نے بجلی کے پیداواری منصوبوں کے افتتاح میں عجلت کے باعث سٹینڈرڈ آپریٹنگ پروسیجرز کو نظرانداز کر دیا، جس کے باعث اربوں روپے کا نقصان ہوا۔ اب اگر تحریک انصاف کی حکومت فوری طور پر اقدامات نہیں کرتی تو نہ صرف اس نقصان میں مزید اضافے کا خدشہ ہے بلکہ نیشنل گرڈ میں ہزاروں میگاواٹ بجلی کی بھی کمی ہو جائے گی۔

صنعت کاروں کا کہنا تھا کہ ”موجودہ حکومت نے ن لیگی حکومت کی اس غلطی کا فوری ازالہ نہ کیا تو ملک میں لوڈ شیڈنگ کی صورتحال سنگین تر ہوجائے گی، جس سے صنعت کا پہیہ رک جائے گا اور ان کے لیے برآمدی آرڈرز پورے کرنا مشکل ہو جائے گا۔“ رپورٹ کے مطابق مسلم لیگ ن کی حکومت نے بن قاسم کوسٹل ایریا میں 1.98ارب ڈالر کی لاگت سے دو پاور پلانٹ لگائے تھے جن کی پیداواری صلاحیت 1320میگاواٹ ہے۔ ان میں سے پہلے پلانٹ کا افتتاح نومبر 2017ءمیں پلانٹ کی تکمیل سے دو ماہ پہلے ہی کر دیا گیا۔ دوسرے پلانٹ سے پیداوار 25اپریل 2018ءکو شروع ہوئی۔ اس بجلی کی ترسیل کے لیے جو ٹرانسمیشن لائن بنائی گئی اس میں اب تک درجنوں بار فالٹ آ چکا ہے جس کی وجہ سے پاورپلانٹ مسلسل نہیں چل پا رہے اور قومی خزانے کو بھاری نقصان اٹھانا پڑ رہا ہے۔یہ ٹرانسمیشن لائن ابھی مکمل بھی نہیں ہوئی تھی کہ پاورپلانٹس کا افتتاح کر دیا گیا۔ ایک پرائیویٹ سیکٹر کمپنی نے بھی پاورپلانٹس کے آپریشن میں خلل آنے سے ہونے والے نقصان کے ہرجانے کے طور پر 5.6ارب روپے کا مطالبہ کردیا ہے۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -