ضم شدہ اضلاع میں انفارمیشن وکمیونیکشین ادارہ کی وسعت ضروری ہے: کامران بنگش 

ضم شدہ اضلاع میں انفارمیشن وکمیونیکشین ادارہ کی وسعت ضروری ہے: کامران بنگش 

  

پشاور(سٹاف رپورٹر) وزیراعلی خیبرپختونخوا کے معاون خصوصی برائے اطلاعات و بلدیات کامران بنگش کو محکمہ اطلاعات و تعلقات عامہ کی جانب سے جاری ترقیاتی و اصلاحاتی ایجنڈے پر عملدرآمد و دیگر امور کے حوالے سے سیکرٹری اطلاعات و تعلقات عامہ ارشد خان اور ڈائریکٹر جنرل امداداللہ نے خصوصی بریفنگ دی گئی۔ معاون خصوصی کو ویب ٹی وی، ریڈیوز، اخباری اشتہارات سمیت ضم شدہ اضلاع کے حوالے سے امور پر تفصیل کے ساتھ بریف کیا گیا۔اس موقع پر متعلقہ حکام کو ہدایات جاری کرتے ہوئے معاون اطلاعات کامران بنگش نے ریمارکس دیئے کہ پختونخوا ریڈیو مہمند پر کام تیز کیا جائے جبکہ محرم الحرام کے بعد باجوڑ و مہمند دونوں ریڈیو سٹیشنزکے باقاعدہ افتتاح کے لیے وقت بھی مقرر کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ ضم شدہ اضلاع میں انفارمیشن و کمیونیکیشن اداروں کی وسعت وقت کی ضرورت ہے کیونکہ فیک نیوز اور پراپیگنڈہ سے عوامی ذہنوں میں شکوک وشبہات پیدا کیے جا رہے ہیں جس سے نمٹنا وقت کی اہم ضرورت ہے۔محکمہ اطلاعات کے اشتہاری امور کو ڈیجیٹائز کرنے پر بات کرتے ہوئے معاون وزیراعلی کامران بنگش نے ہدایات دیں کہ اشتہارات کی آن لائن پراسسنگ جلد از جلد نافذ کی جائے کیونکہ آن لائن اشتہارات پراسسنگ، ڈیجیٹل گورننس کی جانب بہترین قدم ہے۔ آن لائن اشتہارات پراسسنگ کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے معاون خصوصی کامران بنگش نے کہا کہ نئے نظام سے سفارش، کرپشن اور اقربا پروری کا خاتمہ ہوگا اور نظام پر عوام کا اعتماد بڑھے گا۔اخبارات کے لیے اشتہارات کے حوالے سے نئی پالیسی پر ریمارکس دیتے ہوئے معاون خصوصی کامران بنگش نے کہا کہ موجودہ اشتہارات کی پالیسی کو مزید موثر بنانے کے لیے نئی ترامیم کی ضرورت ہے۔ تاکہ میڈیا سے وابستہ کاروباری حضرات کو آسانی مہیا کی جا سکے۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ اطلاعات کو خیبرپختونخوا کے تمام اداروں میں ریڑھ کی ہڈی جیسی اہمیت حاصل ہے جسے وقت کے تقاضوں کے مطابق آگے لے کر جانا ضروری ہے۔نئے ضم شدہ اضلاع کے پریس کلبز کو دی جانے والی گرانٹس پر کمنٹس کرتے ہوئے معاون اطلاعات کامران بنگش نے ہدایت دی کہ وزیراعلی خیبرپختونخوا کی ہدایت کے مطابق نئے ضم شدہ اضلاع کے پریس کلبز کے لیے گرانٹس پر کام مزید تیز کیا جائے تاکہ جلد از جلد گرانٹس چیک متعلقہ حکام کو حوالہ کیا جائے۔ انہوں نے واضح کیا کہ ضم شدہ اضلاع کی ترقی کے لیے تمام سیکٹرز میں ترقیاتی منصوبے جاری ہیں۔ اطلاعات و تعلقات عامہ کی مد میں بھی کئی ٹھوس اقدامات اٹھائے گئے ہیں۔محکمہ اطلاعات کے متعلقہ حکام کو ویب ٹی وی دوبارہ فعال بنانے بارے معاون خصوصی کامران بنگش نے کہا کہ خیبرپختونخوا کے عوام کو بروقت اور سچ پر مبنی معلومات اور خبریں دینے کی خاطر ویب ٹی وی فعال بنایا جائے اور اس حوالے سے مربوط لائحہ عمل وضع کیا جائے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -