ضلعی جنوبی کے بیشترعلاقوں سے ابتک پانی کیوں نہیں نکالاگیا،وزیراعلیٰ سندھ کی انتظامیہ کی سرزنش کردی

ضلعی جنوبی کے بیشترعلاقوں سے ابتک پانی کیوں نہیں نکالاگیا،وزیراعلیٰ سندھ کی ...
ضلعی جنوبی کے بیشترعلاقوں سے ابتک پانی کیوں نہیں نکالاگیا،وزیراعلیٰ سندھ کی انتظامیہ کی سرزنش کردی

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعلیٰ سندھ نے سرزنش کرتے ہوئے کہاکہ ضلعی جنوبی کے بیشترعلاقوں سے ابتک پانی کیوں نہیں نکالاگیا ۔

نجی ٹی وی کے مطابق وزیراعلیٰ سندھ مرادعلی شاہ کی زیرصدارت کراچی میں بارش کے بعد کی صورتحال پر اجلاس ہوا،وزیراعلیٰ سندھ مرادعلی شاہ نے ہدایت کرتے ہوئے کہاکہ 10 محرم کو جلوس کے راستے کلیئر ہونے چاہئیں۔

 کمشنر کراچی نے بریفنگ دیتے ہوئے کہاکہ ٹاور پر کچھ مقامات پر پانی کھڑا ہے جس کو کلیئرکروارہے ہیں،وزیراعلیٰ سندھ نے کہاکہ بارش کے بعد بیشترعلاقوں میں ابھی تک بجلی بحال نہیں ہوئی۔

وزیراعلیٰ سندھ کو آگاہی دیتے ہوئے کہاکہ کے الیکٹرک کے 1900 فیڈرز میں سے 170 ابھی بحال ہونا باقی ہیں ،وزیراعلیٰ سندھ نے سرزنش کرتے ہوئے کہاکہ ضلعی جنوبی کے بیشترعلاقوں سے ابتک پانی کیوں نہیں نکالاگیا۔

وزیراعلیٰ سندھ نے کہاکہ کے ایم سی کا اربن ڈیزاسٹر رسپانس یونٹ بھی متحرک نظرنہیں آیا،بارش کے پانی کے بہاﺅ کو روکنے کے تمام مقامات کی نشاندہی کرکے دیں ،پانی کے بہاﺅ میں رکاوٹ بننے والی عمارت کو بلڈوز کریں چاہے وہ سرکاری ہو یا نجی ۔

وزیراعلیٰ سندھ مرادعلی شاہ نے کہاکہ کام کرنے والے سرکاری عملے کو جیکٹ پہنائیں تاکہ عوام کو معلوم ہو سکے حکومت متحرک ہے،وزیراعلیٰ نے سینئرممبربورڈآف ریونیوکو کراچی سمیت تمام اضلاع کے سروے کی ہدایات کردی،ڈپٹی کمشنر نے کہاکہ ملیرکے تقریباً تمام علاقوں سے پانی کی نکاسی ہو گئی،کچھ گلیوں میں پانی موجود ہے،وزیراعلیٰ سندھ نے کہاکہ مجھے تمام گلیاں صاف چاہئیں،لوگ کہتے ہیں حکومت نظر نہیں آتی ، تمام ڈی سیز اپنے علاقو کے نالوں کی دیکھ بھال کریں کہیں چوک تو نہیں ،حکومتی لوگ کام کررہے ہیں لیکن سول ڈریس کی وجہ سے پہچانے نہیں جاتے ،وزیراعلیٰ سندھ نے ہدایت کی آپ سب کو کوئی جیکٹ پہنائیں ۔

مزید :

قومی -علاقائی -سندھ -کراچی -