گجرات کے مذہبی فسادات سے تکلیف پہنچی تھی‘ نریندر مودی

گجرات کے مذہبی فسادات سے تکلیف پہنچی تھی‘ نریندر مودی

نیودہلی (اے پی پی) بھارتی جنتا پارٹی کے رہنما نریندر مودی نے کہا ہے کہ گجرات کے مذہبی فسادات سے تکلیف پہنچی تھی۔ جرمن خبر رساں ادارے کے مطابق بھارتی اپوزیشن جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی کے وزارت عظمیٰ کے امیدوار نریندر مودی نے کہا ہے کہ گجرات میں ان کی وزارت اعلیٰ کے دور میں ہونیوالے مذہبی فسادات نے ان کی روح تک کو جھنجھوڑ کے رکھ دیا تھا۔ مودی نے کہا کہ وہ ان فسادات کے متاثرین کے غم میں شریک ہیں اور انہیں ان فسادات سے شدید تکلیف پہنچی تھی۔ واضح رہے کہ نریندر مودی کو 2002ءمیں ہونے والے ان فسادات کے تناظر میں گزشتہ ایک دہائی سے مسلسل تنقید کا نشانہ بنایا جاتا رہا ہے۔

مزید : عالمی منظر