ہسپتالوں میں جعلی ادویات سپلائی کرنیوالی 2فارما سیوٹیکل کمپنیاں بلیک لسٹ

ہسپتالوں میں جعلی ادویات سپلائی کرنیوالی 2فارما سیوٹیکل کمپنیاں بلیک لسٹ ...

                                    لاہور ( جاوید ا قبال) سرکاری ہسپتالوں میں جعلی اور غیر معیاری ادویات فراہم کرنے پر محکمہ صحت نے دو بڑی میڈیسن کمپنیوں پر سرکاری ہسپتالوں میں ادویات فراہم کرنے پر پابندی عائد کر دی ہے اور ان کو باقاعدہ طورپر بلیک لسٹ قرار دے دیا ہے جس کا سیکرٹری صحت جواد رفیق ملک نے باقاعدہ طور پر نوٹیفکیشن جاری کر دیا ہے، جس پر کہا گیا ہے کہ ان کمپنیوں جن میں رائیونڈ روڈ روڈ پر واقع میڈی سینا فارما سیوٹیکل جو کہ ریاست علی بھٹی کی ملکیت ہے اور سندر میں واقع میڈی سرچ نامی فارما سیوٹیکل جو کہ احمد علی ناگرا نامی شخص کی ملکیت ہے ، ان دونوں کمپنیوں نے مختلف سرکاری ہسپتالوں کو غیر معیاری ادویات فراہم کی تھیں ان کی فراہم کردہ ادویات کو ڈرگ ٹیسٹنگ لیبارٹری نے دوران تصدیق غیر معیاری قرار دیا جس پر دونوں کمپنیوں کے مالکان کے چیف ایگزیکٹو سمیت ذمہ داران کے خلاف مقدمات درج کیے گئے ہیں ۔ بعد ازاں دونوں ضمانتوں پر رہا ہو گئے ہیں۔ اس کی تحقیقات کے لئے سیکرٹری صحت نے کمیٹی تشکیل دی جس میں الزامات ثابت ہو گئے جس پر ایکشن لیتے ہوئے سیکرٹری صحت نے رائیونڈ روڈ پر واقع ریاست علی بھٹی کی ادویات بنانے والی کمپنیوں کو بلیک لسٹ قرار دے دیا ہے جس کے بعد سیکرٹری صحت کی طرف سے ہسپتالوں کو مراسلہ جاری کر دیا گیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ ان کمپنیوں کی طرف سے سرکاری ہسپتالوں کو ادویات کی سپلائی پر پابندی عائد کر دی گئی ہے ان سے ادویات نہ خرید کی جائے اس حوالے سے سیکرٹری صحت جواد رفیق ملک سے بات کی گئی تو انہوں نے کہا کہ مریضوں کو غیر معیاری ادویات فراہم کرنے والے ادویات ساز ادارے بند ہونگے ان کمپنیوں کے لائسنس منسوخ کرنے کے لئے وفاق حکومت کو خط لکھ دیا گیا ہے جعلی ادویات مافیا جتنا مرضی طاقتور ہو گا اس کو کیفر کردار تک پہنچائیں گے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1