پی ٹی آئی کے رہنماکوگھرمیں بم نصب کرنے کی دھمکی آمیزکال

پی ٹی آئی کے رہنماکوگھرمیں بم نصب کرنے کی دھمکی آمیزکال

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لاہور(وقائع نگار)اقبال ٹاؤن میں سابق مشیر وزیر اعلیٰ اور رہنما تحریک انصاف کے موبائل فون پر نامعلوم افراد نے فون کر کے دھمکی دی کہ ان کے اہل خانہ کو بم دھماکے میں اڑا دیا جائے گا ۔جس کے بعد یہ بھی کہا گیا کہ ان کے گھر میں بم نصب کر دیا گیا ہے ۔دھماکے کا انتظار کریں جس پر قانون نافذ کرنے والے اداروں نے اطلاع ملنے پر وہاں ڈیرے ڈال لئے ہیں ۔بتایا گیا ہے کہ گزشتہ روز سابق مشیر وزیر اعلیٰ اور تحریک انصاف کے رہنما میاں محمود احمد جو کہ 40سی چناب بلاک اقبال ٹاؤن میں رہائش پذیر ہیں ،ان کو نامعلوم افراد نے موبائل فون پر کال کر کے اطلاع دی کہ انہیں معلوم ہے کہ ان کے گھر میں بم نصب کر دیا گیا ہے جو تھوڑی ہی دیر کے بعد پھٹ جائے گا ۔اور دھماکے میں ان کے تمام اہل خانہ کو مارنے کا منصوبہ بنایا گیا ہے ۔اس اطلاع پر میاں محمود احمد نے خوف زدہ ہو کر ایمرجنسی پولیس کو اطلاع دینا چاہی تو نا معلوم افراد کی جانب سے دوبارہ کال آ گئی اور کہا گیا کہ دھماکے کا انتظار کریں دھماکے کے تمام تر انتظامات مکمل کر لئے گئے ہیں ۔میاں محمود احمد نے فون بند کرنا چاہا تو نامعلوم افراد نے دوبارہ کال کر دی کہ فون بند کیوں کر رہے ہیں فون کھلا رہنے دیں ہم بھی دھماکے کی آواز سننا چاہتے ہیں ۔جس پر میاں محمود احمد نے قانون نافذ کرنے والے اداروں کو اطلاع کر دی ۔جس پر پولیس کی بھاری نفری موقع پر پہنچ گئی اور بم ڈسپوزل اسکوارڈ کا عملہ بھی پہنچ گیا اور انہوں نے گھر کی تلاشی شروع کر دی ۔معلوم ہوا ہے کہ کال کرنے والے کا فون قانون نافذ کرنے والے اداروں کو بھی آن ملتا رہا جب قانون نافذ کرنے والے اداروں نے وہاں کال کی تو ذرائع کے مطابق حملہ آور نے کہا کہ جلدی کس بات کی ہے انتظار کریں اور فون بندکر دیا۔تاہم قانون نافذ کرنے والے کسی افسر نے فون کے آن ہونے کی تصدیق نہیں کی ۔اور انہوں نے بتایا کہ ملزم کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جا رہی ہے ۔

مزید :

علاقائی -