گندہ پانی دریائے چناب میں پھینکنے کے خلاف درخواست پر دوبارہ نوٹس

گندہ پانی دریائے چناب میں پھینکنے کے خلاف درخواست پر دوبارہ نوٹس

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہورہائیکورٹ کی جسٹس عائشہ اے ملک نے سیوریج کا گندہ پانی دریائے چناب میں پھینکنے کے خلاف دائر درخواست پر سیکرٹری ماحولیات کو جواب داخل کروانے کے لئے دوبارہ نوٹس جاری کر دیاجبکہ مزید سماعت27جنوری تک ملتوی کر دی ہے ۔درخواست گزارہارون ملک کی درخواست ان کی طرف سے ثمرہ ملک ایڈووکیٹ نے پیش ہو کر عدالت کے روبرو موقف اختیار کیا کہ ضلعی حکومت کی غفلت سے دریائے چناب میں سیوریج کا گندہ پانی پھینکا جا رہا ہے۔ جس کی وجہ سے مچھلیوں سمیت دیگر آبی حیات کی زندگیاں متاثر ہو رہی ہیں جبکہ ماحولیاتی آلودگی میں بھی اضافہ ہو رہا ہے لہذا دریائے چناب میں گندہ پانی پھینکنے سے روکنے کا حکم کا حکم دیا جائے، سرکاری وکیل کی طرف سے عدالت کو بتایا گیا کہ جس ٹریٹمنٹ پلانٹ کے تحت گندہ پانی دریائے چناب میں پھینکا جا رہا تھا وہ پلانٹ بند کر دیا گیا ہے۔، انہوں نے بتایا کہ سیکرٹری ماحولیات کی طرف سے ابھی جواب آنا باقی ہے جس پر عدالت نے سیکرٹری ماحولیات کو جوا ب داخل کرنے کیلئے دوبارہ نوٹس جاری کرتے ہوئے مزید سماعت27جنوری تک ملتو ی کردی ۔

مزید :

صفحہ آخر -