مشرف پر بھروسہ زندگی کی سب سے بڑی غلطی تھی: ڈاکٹر عبدالقدیر

مشرف پر بھروسہ زندگی کی سب سے بڑی غلطی تھی: ڈاکٹر عبدالقدیر
مشرف پر بھروسہ زندگی کی سب سے بڑی غلطی تھی: ڈاکٹر عبدالقدیر

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد(آن لائن) جسٹس ڈیمو کریٹک پارٹی کے سربراہ ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے کہا ہے کہ سابق صدر پرویز مشرف پر اعتبار کرنا میری زندگی کی سب سے بڑی غلطی تھی، انکے سامنے انکار کرتا تو اچھا ہوتا۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق ڈاکٹر عبدالقدیر خان کا کہنا ہے کہ سابق وزیراعظم ذوالفقار علی بھٹو ایک محب وطن انسان تھے، انکا جوڈیشل قتل نہیں بڑا ظلم تھا، انہوں نے ایسے حالات میں ملک کے باگ ڈور سنبھالے تھے کہ ملک کے حالات مکمل خراب تھے۔ تھوڑے عرصے میں عوام کا اعتماد بحال کر دیا اور حالات کو قابو کر لیا۔ میں نے ذوالفقار علی بھٹو کو جیسے ہی خط لکھا تو فوراً بلا لیا۔ انہوں نے کہا کہ بے نظیر بھٹو اچھی خاتون تھی، انہوں نے بھی میری بہت مدد کی۔

چارٹر آف ڈیمو کریسی پر آج بھی قائم ہیں ،میں نہ مانوں کی پالیسی پر چلنے والوں کا کوئی علاج نہیں :وزیر اعظم

انہوں نے کہا کہ ایان علی کیس میں بری ہو جائیگی لیکن کیس ختم نہیں ہوگا، انکی کیس کی تاریخ پر تاریخ ہوگی۔ انہوں نے کہا عدلیہ تحریک میں وکلاءکا کردار بہت قابل ستائش ہے، وکلاءبرادری جس پارٹی کے ساتھ ہوتے ہیں وہ جیت جاتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سابق چیف جسٹس افتخار چوہدری بحال ہوئے تو پرویز مشرف ملک سے باہر چلے گئے وہ عدلیہ کے سربراہ تھے، مشرف کیخلاف مقدمہ کا فیصلہ وہ ایک ہفتے میں دے سکتے تھے۔

مزید :

اسلام آباد -