پانامالیکس کی تحقیقات پارلیمانی کمیٹی سے کرانے کے لئے سپریم کورٹ میں آئینی درخواست دائر

پانامالیکس کی تحقیقات پارلیمانی کمیٹی سے کرانے کے لئے سپریم کورٹ میں آئینی ...
پانامالیکس کی تحقیقات پارلیمانی کمیٹی سے کرانے کے لئے سپریم کورٹ میں آئینی درخواست دائر

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(نامہ نگارخصوصی )پانامالیکس کی تحقیقات پارلیمانی کمیٹی کے ذریعے کرانے کے لئے سپریم کورٹ میں آئینی درخواست دائر کردی گئی ہے۔ وطن پارٹی کے بیرسٹر ظفر اللہ خان کی جانب سے سپریم کورٹ لاہوررجسٹری میں دائر درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ قوانین کے تحت پانامالیکس کی تحقیقات کے لئے سپریم کورٹ متعلقہ فورم نہیں، مختلف سیاسی جماعتوں کی جانب سے پاناما لیکس کی تحقیقات کیلئے دائر درخواستیں قابل سماعت نہیں۔

درخواست میں کہا گیا ہے کہ پانامالیکس سے کسی سیاسی جماعت کے بنیادی حقوق متاثر نہیں ہوئے جبکہ وائٹ کالر کرائم کا پتہ چلانا ایف بی آر کا اختیار ہے،ایف بی آر مالی بے ضابطگیوں کی تحقیقات میں مہارت رکھتا ہے،لہذادرخواست گزاروں کو پاناما لیکس کے تحت مالی بے ضابطگیوں کی تحقیقات کے لئے سپریم کورٹ سے رجوع کرنے کی بجائے ایف بی آر سے رجوع کرنا چاہئے تھا جبکہ فیڈرل بورڈ آف ریونیو کی تحقیقات کی رپورٹ سپریم کورٹ میں پیش کی جاسکتی ہے، درخواست میں مزیدکہا گیا کہ سپریم کورٹ میں درخواستیں دائر کرنے والی تحریک انصاف سمیت دیگر سیاسی جماعتیں پارلیمنٹ کا بائیکاٹ ختم کرچکی ہیں اور پانامالیکس کا معاملہ پارلیمنٹ میں اٹھایا ہے،استدعا ہے کہ پاناما لیکس کی تحقیقات کے لئے پارلیمانی کمیٹی تشکیل دی جائے۔

مزید :

لاہور -