بار کی عزت اپنی جگہ مگر عدلیہ سے مذاق برداشت نہیں کیا جاسکتا،جسٹس قاسم خان

بار کی عزت اپنی جگہ مگر عدلیہ سے مذاق برداشت نہیں کیا جاسکتا،جسٹس قاسم خان
بار کی عزت اپنی جگہ مگر عدلیہ سے مذاق برداشت نہیں کیا جاسکتا،جسٹس قاسم خان

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(نامہ نگارخصوصی )لاہورہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس محمد قاسم خان نے لڑائی جھگڑے کے کیس میں عبوری ضمانت کے لئے دائر درخواست مسترد کر تے ہوئے تفتیشی افسر کو ملزم کو عدالت سے باہر گرفتار کرنے کی ہدایت کر دی ۔

فاضل جج نے دوران سماعت قرار دیا کہ فوری نوعیت کی درخواستیں دائر کرنے والے وکلاءگھر بیٹھے اپنے منشیوں کے ذریعے تاریخیں حاصل کرتے ہیں، بار کی عزت اپنی جگہ مگر عدلیہ سے مذاق برداشت نہیں کیا جاسکتا،گزشتہ روز منشی کے ذریعے عدالت سے تاریخ نہ ملنے پر وکیل خود پیش ہوا اور عدالت سے استدعا کی کہ اس کی اپنے کیس کی تیاری نہیں لہذا تاریخ دے دی جائےجس پر عدالت نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ عبوری ضمانت کے مقدمات میں وکلاءیہ تصور لے کر عدالتوں کا رخ کرنے لگے ہیں کہ عدالتوں نے انہیں ریلیف ہی دینا ہے یہی وجہ ہے کہ عدالت میں پیش ہوتے ہوئے قانون کی کتابیں اور مقدمات سے متعلقہ ریکارڈ ساتھ نہ لانے کا کلچر فروغ پا چکا ہے۔عدالت نے لڑائی جھگڑے کے ملزم شوکت کی عبوری ضمانت کی درخواست مسترد کرتے ہوئے کمرہ عدالت میں موجود تفتیشی افسر کو ہدایت کی کہ وہ ملزم کو عدالت سے باہر گرفتار کرے۔

مزید :

لاہور -