عمر میں اضافہ اور ازدواجی فرائض کی ادائیگی، سائنس نے ایسی خبرسنادی کہ جان کر نئے شادی شدہ افراد بے حد پریشان ہوجائیں گے

عمر میں اضافہ اور ازدواجی فرائض کی ادائیگی، سائنس نے ایسی خبرسنادی کہ جان کر ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

نیویارک (نیوز ڈیسک) ازدواجی مسرت کو عموماً جوانی سے ہی منسوب کیا جاتا ہے لیکن سائنسدانوں نے ایک ایسی بات دریافت کی ہے کہ جان کر آپ بھی کہیں گے کہ بزرگوں کا کوئی مقابلہ نہیں۔
اخبار مرر کی رپورٹ کے مطابق تازہ ترین تحقیق میں انکشاف ہوا ہے کہ جب عمر 60برس سے اوپر ہوجاتی ہے تو جنسی صلاحیت میں کمی واقع ہوجاتی ہے مگر اس کے متبادل کے طور پر معمر جوڑے اپنی تخلیقی صلاحیتوں کو استعمال کرتے ہوئے لطف اٹھانے کے نئے نئے اور انوکھے طریقے ایجاد کرلیتے ہیں۔ معمر افراد کی ازدواجی زندگی بہتر ہونے کی ایک بنیادی وجہ یہ بھی بتائی گئی ہے کہ اس عمر میں جنسی تعلق کی مقدار کی بجائے کوالٹی پر زیادہ توجہ مرکوز ہوتی ہے۔ یہ جوڑے زندگی سے لطف اندوز ہونے کے لئے زیادہ سوچ بچار سے کام لیتے ہیں اور دانشمندانہ حکمت عملی اختیار کرتے ہیں۔ ان کی پچھلی زندگی کا تجربہ بھی ان کے بہت کام آتا ہے۔
یونیورسٹی آف منیسوٹا کے سائنسدانوں نے اس تحقیق کے لئے 20 سے 93 سال عمر کے 6ہزار سے زائد افراد کی ازدواجی زندگی کے بارے میں معلومات حاصل کی۔ یہ طویل تحقیق 1995ءسے لے کر 2013ءتک مختلف سالوں کے دوران کی گئی۔ تحقیق کی سربراہی کرنے والی سائنسدان میری فوربز کا کہنا تھا ”عمر بڑھنے کے بعد ازدواجی تعلق کی مقدار میں کمی واقع ہوجاتی ہے لیکن معمر جوڑوں کی کوشش ہوتی ہے کہ وہ جب بھی تعلق استوار کریں تو اسے زیادہ سے زیادہ پرمسرت بنائیں۔ اس کے برعکس نوجوان جوڑے کوالٹی سے زیادہ مقدار کی جانب متوجہ رہتے ہیں۔ نوجوانوں اور معمر افراد کے تقابل سے ہمیں معلوم ہوا کہ مجموعی طور پر معمر افراد کی ازدواجی زندگی نوجوانوں سے کہیں زیادہ بہتر تھی۔ یہ بات ہمارے لئے بہت حیران کن تھی۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -