ہم تقسیم کی بات نہیں کررہے،کراچی کو قومی دھارے سے زبردستی نکالا جارہا ہے:فاروق ستار

ہم تقسیم کی بات نہیں کررہے،کراچی کو قومی دھارے سے زبردستی نکالا جارہا ...
ہم تقسیم کی بات نہیں کررہے،کراچی کو قومی دھارے سے زبردستی نکالا جارہا ہے:فاروق ستار

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن) ایم کیو ایم پاکستان کے سربراہ فاروق ستار نے کہا ہے کہ ہم نے کبھی بھی تقسیم کی بات نہیں کی اور نہ ہی اب کررہے ہیں ، کراچی بکھرا اور بٹا ہوا نہیں ہے،کراچی کو پاکستان کے قومی دھارے سے زبردستی نکالا جارہاہے۔

جے سی سی آئی اجلاس میں کراچی سرکلر ریلوے، کیٹی بندرگاہ اور سپیشل اکنامک زون کے جائزہ کیلئے کمیٹی قائم کردی گئی: جام خان شورو
نجی ٹی وی جیو نیوز کے پروگرام ”آج شاہ زیب خانزادہ کی ساتھ“میں گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ کراچی کی سیاست کو اب لوگ ایک پلیٹ فارم پر ہی دیکھنا چاہتے ہیں،یہاں جدوجہد سندھ کے شہری علاقوں میں رہنے والوں نے کی ہے۔کراچی کے شہریوں کے بنیادی مسائل حل نہیں ہورہے،30 دسمبر 8 اگست 1986 کی طرح کا دن ہوگا۔ان کا کہنا تھا کہ ایم کیوایم پاکستان کے تین ذمے داروں کوکل سے اب تک گرفتارکیاگیاہے،علی رضا عابدی کے مسئلے پر جو ہوا وہ رکارڈ پر ہے،ہمیںکراچی میں کہاں آفس کھولنے کی اجازت ملی ہے؟
انہوں نے کہا کہ ہم پاکستان کی سیاست پاکستان میں رہ کرکر رہے ہیں،30دسمبر کو 22 اگست بہت پیچھے رہ جائے گی۔22 اگست کے بعد بانی ایم کیوایم سے ہمارا کسی قسم کا اتحاد ممکن نہیں ہوسکتا،22 اگست سے پہلے جو چیزیں ناقابل دفاع تھیں ہم نے ان کا بھی دفاع کیاہے۔

مزید :

کراچی -