انسٹیٹیوٹ آف نیورو سائنسز کامعیار آغا خان سے کم نہیں،عثمان عارف

    انسٹیٹیوٹ آف نیورو سائنسز کامعیار آغا خان سے کم نہیں،عثمان عارف

  



 لاہور(جنرل رپورٹر)پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف نیورو سائنسز میں مریضوں کو فراہم کی جانے والی طبی و تشخیصی سہولیات اور پیشنٹ کئیر کا معیار آغا خان ہسپتال سے کم نہیں اور اس ادارے میں دماغی امراض کے علاج کی سہولیات کا مقابلہ کسی بھی بین الاقوامی ہسپتال سے کیا جا سکتا ہے۔پی آئی این ایس میں بین الاقوامی طرز کے طبی آلات کے باعث شہریوں نے نجی سیکٹر کو ترجیح دینا چھوڑ دی،ان خیالات کا اظہار چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری سیالکوٹ کے سابق ممبر اور معروف صنعت کار سابق ایگزیکٹو ممبر عثمان عارف شیخ نے وزیر صحت پنجاب کے نام لکھے گئے ایک خط میں کیا۔ انہوں نے نیورو سائنسز میں سہولیات کی بہترین فراہمی پر وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد، محکمہ صحت اور ایگزیکٹو ڈائریکٹر پروفیسر خالدمحمود کو مبارکباد دیتے ہوئے ان کی کاوشوں کو سراہا۔ تفصیلات کے مطابق عثمان عارف شیخ کی اہلیہ شہلا عثمان نیورو سرجری یونٹ 2میں پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود کے زیر علاج رہیں اور آپریشن کے بعد شفا یاب ہو کر ڈسچارج کی گئیں۔ انہوں نے ڈاکٹرز،نرسز و پیرا میڈیکل سٹاف کی محنت اور قابلیت کا بر ملا اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ اُن کی اہلیہ کو طبی عملے نے انتہائی دوستانہ ماحول فراہم کیا اور اُن کی دیکھ بھال میں کوئی کسر اٹھا نہ رکھی۔عثمان عارف شیخ نے اپنے خط میں مزید تحریر کیا ہے کہ انہوں نے ڈاکٹرز، نرسز اور پرامیڈیکس کو انتہائی پیشہ وارانہ اہلیت کا حامل پایا اور ادارے کے انتظامی امور بھی بہت احسن طریقہ سے چلائے جا رہے ہیں جس کی بنا پر ڈاکٹرز و عملہ انسٹیٹیوٹ میں آنے والے مریضوں اور انکے لواحقین کا بھرپور خیال رکھتا ہے۔

عثمان عارف

مزید : میٹروپولیٹن 1