عمران خان کی اپنی کابینہ میں کرپٹ وزراء شامل ہیں: سردار حسین بابک

عمران خان کی اپنی کابینہ میں کرپٹ وزراء شامل ہیں: سردار حسین بابک

  



بونیر(ڈسٹرکٹ رپورٹر)عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری اور حلقہ پی کے 22 کے ایم پی اے سردار خسین بابک نے کہاہے کہ تبدیلی کے نام پر لائی گئی حکومت ڈیڑھ سال کے دوران ناکامی سے دوچار ہے۔دوسروں پر کرپشن کے الزامات لگانے والے عمران خان کے اپنی کابینہ میں کرپٹ وزراء شامل ہے۔بی آرٹی منصوبے کی پشاور ہائی کورٹ کی تحقیقات کے خلاف حکومت نے سپریم کورٹ اف پاکستان میں درخواست دائیر کی ہے۔موجودہ حکومت کی کوئی معاشی پالیسی نہیں ہے۔ملک میں مہنگائی اور بے روزگاری سے عوام کی برا حال ہے۔مگر حکومتی وزراء کو کوئی پتہ نہیں ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے دورہ بونیر کے دوران اے این پی کے سابق امیدوار اور حلقہ پی کے 20 کے صدر افسر خان کے چچا اور ریٹائیرڈ ہیڈماسٹر ظریف خان کے چھوٹے بھائی ریٹائیرڈ پرنسپل ماہ منیر کی وفات پر فاتحہ خوانی کے موقع پر میڈیا سے گفتگوں کے دوران کیا۔اس موقع پر پارٹی کے اہم رہنماء شمس بونیری ایڈوکیٹ۔سابق ضلع نائب ناظم محمد خان کے علاوہ پارٹی کارکن بھی موجود تھے۔صوبائی جنرل سیکرٹری نے کہا کہ حکومت کی اناہل معاشی ٹیم کی وجہ سے مہنگائی اور بے روزگاری عروج پر ہے۔ملک کے تمام ادارے تباہی کے دہانے پر کھڑے ہے۔صوبہ خیبر پختون خواہ میں کوئی میگا پراجیکٹ شروع نہ ہوسکا۔بی آرٹی میں اربوں روپے کی کرپشن نیب کو نظرنہیں اتی۔عمران خان نے اپنو کو نواز نے کے لئے صدارتی آرڈیننس نافذ کیاہے۔پارلیمنٹ کی کوئی اہمیت نہیں ہے۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اے این پی ایک جمہوری پارٹی ہے۔اختلاف رائے ہر کسی کا حق ہے۔مگر جلسوں میں پارٹی تنظیم کے خلاف تقاریر کرنا پارٹی کے اصولوں کی کھلم کھلا خلاف ورزی ہے۔جسکی پارٹی کی صوبائی قیادت نوٹس لے گی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر