پاک بحریہ دشمن کے ناپاک منصوبوں کو ناکام بنانے کیلئے تیار: نیول چیف

  پاک بحریہ دشمن کے ناپاک منصوبوں کو ناکام بنانے کیلئے تیار: نیول چیف

  



اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)چیف آف دی نیول اسٹاف ایڈمرل ظفر محمود عباسی نے کہا ہے کہ متنازعہ ریاست جموں و کشمیر کی حیثیت کو تبدیل کرنے کا اقدام ہندوتوا نظریہ کو فروغ دینے کی ہندوستانی حکومت کی پالیسی کاایک اور مظہر ہے، اس کا مقصد بھارت کوانتہا پسندہندو اکثریتی”ہندوستان“ میں تبدیل کرنا ہے، بھارت اور پاکستان کے مابین مسئلہ کشمیر بنیادی تنازعہ ہے،ا س کے سمندری سلامتی کی صورتحال پر بھی شدید اثرات مرتب ہو رہے ہیں، پاک بحریہ دشمن کے ناپاک منصوبوں کو ناکام بنانے کے لئے تیارہے۔ نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف میری ٹائم افئیرز کے زیر اہتمام سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے چیف آف دی نیول اسٹاف ایڈمرل ظفر محمود عباسی نے کہا کہ بھارت اور پاکستان کے مابین مسئلہ کشمیر بنیادی تنازعہ ہے جس کے سمندری سلامتی کی صورتحال پر بھی شدید اثرات مرتب ہو رہے ہیں۔ پاک بحریہ اس کے نتیجے میں پیدا ہونے والے چیلنجز سے بخوبی واقف ہے اور وہ دشمن کے ناپاک منصوبوں کو ناکام بنانے کے لئے تیارہے۔سیمینار سے آزاد جموں و کشمیر کے وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر، سینیٹر مشاہد حسین سید،سابق سفیرعبدالباسط،سابقہ چیئر مین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی جنرل زبیر محمود حیات، گروپ کیپٹین سلطان محمد حالی (ر)، ڈاکٹر رابعہ اختر کے علاوہ نامور پالیسی میکرز، دفاعی تجزی کاروں اور تعلیم کے شعبے سے تعلق رکھنے والے افراد نے مسئلہ کشمیر کے تاریخی، قانونی، اخلاقی اور سماجی و سیاسی پہلو ں پر روشنی ڈالنے کے ساتھ ساتھ بی جے پی کے فاشسٹ ہندوتوا نظریات کے فروغ پر بھی سیر حاصل گفتگو کی۔

نیول چیف

مزید : صفحہ اول