محکمہ ایکسائز‘ ملازمین کیخلاف مختلف محکموں کو جعلی درخواستیں دینے کا انکشاف

  محکمہ ایکسائز‘ ملازمین کیخلاف مختلف محکموں کو جعلی درخواستیں دینے کا ...

  



ملتان (نیوز رپورٹر) محکمہ ایکسائز ٹیکسیشن اینڈ نارکوٹکس ملتان کے چند مخصوص عناصر کی جانب سے پرکشش پراپرٹی سرکلز، چیکنگ سکواڈ، تھیٹرز پر ڈیوٹیز کے حصول اور موٹر برانچ پر اثر رسوخ رکھنے کے لیئے ملازمین کی کردار کشی اور مختلف اداروں کو بھیجی جانیوالی جعلی درخواستوں نے ملازمین میں خوف و ہراس پھیلا دیا ہے بلکہ محکمہ کے مختلف شعبہ جات کی ٹیکس ریکوری بھی(بقیہ نمبر48صفحہ7پر)

شدید متاثر ہوکر رہ گئی ہے۔ سیاسی و امن وامان سے متعلقہ ایجنسیوں سے اثر و رسوخ کی دھونس دھاندلی سے پورے آفس کو یرغمال بناکر رکھ دیا گیا ہے سابق ڈائریکٹر تنویر عباس گوندل کے او ایس ڈی بنائے جانے اور ڈائریکٹر عبداللہ خان جلبانی کی ملتان آفس میں تعیناتی کے فوری بعد ان عناصر کی چاندی ہوگئی ہے پچھلے تین ماہ کے دوران بھاری رقوم وصول کرکے متعدد ملازمین کی پرموشن کروائی جاچکی ہے اور بعض ملازمین بالخصوص لیڈی انسپکٹرز کے خلاف جعلی ناموں سے محکمہ انٹی کرپشن، ڈی جی آفس اور ڈائریکٹر ایکسائز کو درخواستیں دینے سے ملازمین میں سخت تشویش پائی جارہی ہے جس کے باعث ملتان آفس کی کارکردگی شدید متاثر ہوکر رہ گئی ہے اور محکمہ کے تمام شعبہ جات میں ٹیکس ریکوری پچھلے سال سے بھی کم ہوکر رہ گئی ہے ملازمین نے نام نہ ظاہر کرنے پر بتایا ہے ملازمین کی شکل میں یہ مافیا آفس کے ملازمین کو نہ صرف بلیک میل کرتا ہے بلکہ بھتہ وصولی بھی کرتا ہے ڈائریکٹر ایکسائز ملتان ملازمین کو اس مافیا سے نجات دلائیں تاکہ ملازمین اپنی پوری توجہ ٹیکس ریکوری پر دے سکیں۔

سرکلز

مزید : ملتان صفحہ آخر