بھارت میں اقلیتوں کو ختم کیا جارہا ہے: ڈاکٹر سلیم حیدر

    بھارت میں اقلیتوں کو ختم کیا جارہا ہے: ڈاکٹر سلیم حیدر

  



کراچی (سٹاف رپورٹر)مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدر نے بھارت کے شہروں دہلی، احمد آباداور دیگر میں آر ایس ایس کے دہشت گرد غنڈے اور ریاستی اداروں کی جانب سے مسلمانوں پر شب و خون مارنے، انہیں شہید کرنے، ان کی املاک نذرآتش کئے جانے اور مساجد و مدارس پر حملوں کو مودی حکومت کی دہشت گردانہ کارروائی قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ بھارتی حکومت سیکولر کے دعوؤں کے برخلاف بھارت میں اقلیتوں کو کچلنے اور ان کے خلاف انتقامی کارروائیاں کرنے میں مصروف ہے۔ اب تک درجنوں مسلمانوں کو بیدردی سے شہید کیا جاچکا ہے، سینکڑوں زخمی اور ہزاروں کی تعداد میں بے گناہ مسلمان گرفتار ہیں جو اس بات کا ثبوت ہے کہ بھارت کے دہشت گرد اور قاتل وزیراعظم نریندر مودی اپنی ذہنی تسکین کیلئے کشمیر سے لے کر دہلی تک مسلمانوں کے خون سے ہولی کھیل رہے ہیں۔ بدقسمتی سے اقوام متحدہ اور عالمی ضمیر خاموش تماشائی بنا ہوا ہے۔ مسلمانوں کے اس قدر قتل عام پر بھی کسی سمت سے کوئی احتجاج نہیں کیا جارہا ہے اور نہ ہی بھارتی حکومت کیخلاف معاشی پابندیاں لگائی جارہی ہیں۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان کو فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کے نام پر تو ہراساں کیا جاتا ہے لیکن بھارت میں جہاں کھلے عام سڑکوں پر مسلمانوں کا خون بہایا جارہا ہے ان کیخلاف اس نازی حکومت کیخلاف ایف اے ٹی ایف بھی خاموش ہے۔ بھارت میں رہنے والے مسلمان مہاجروں کے عزیز واقارب اور آباؤ اجداد ہیں ہم ان کے قتل عام پر خاموش نہیں رہ سکتے۔ انہوں نے حکومت پاکستان سے اپیل کی کہ وہ اس مسئلے کا سنجیدگی سے نوٹس لیں اور پوری دنیا میں اس حوالے سے بھارت کو بے نقاب کیا جائے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر