علی محمد خان کے سابق سیکرٹری کی پی ٹی آئی رہنما کیساتھ تلخ کلامی

علی محمد خان کے سابق سیکرٹری کی پی ٹی آئی رہنما کیساتھ تلخ کلامی

  

تخت بھائی(نامہ نگار )NA-10سے پی ٹی آئی کے ایم این اے انجینئر علی محمد خان کے سابقہ پولیٹیکل سیکرٹری و محکمہ صحت کے ملازم سجاد انور اور تحریک انصاف کے رہنماء ندیم محمد خان آف لوند خوڑ کے مابین ویڈیوں بنانے کے تنازعے پر ہاتھا پائی۔ندیم محمد خان کے ذاتی ملازموں نے سجاد انور کی پٹائی کر کے ان کے کپڑے پھاڑ دیے۔تفصیلات کے مطابق ایم این اے علی محمد خان کے سابقہ پولیٹیکل سیکرٹری سجاد انورمحکمے کی گاڑی میں فیملی کے ہمراہ پی ایس او پمپ شیر گڑھ بازار میں پٹرول ڈلوانے کھڑا تھا کہ اس دوران پی ٹی آئی کے رہنماء ندیم محمد خان آف لوند خوڑ ان کی ویڈیوں بنانے لگا، اس تنازعے پر دونوں میں تلخ کلامی اور ہاتھا پائی ہوئی جس پر ندیم محمد خان کے ذاتی ملازموں نے سجاد انور کو مار پیٹ کر ان کے کپڑے پھاڑ دیے۔ بعد میں شیر گڑھ پولیس نے سجاد انور ولد لاج محمد سکنہ ہاتھیان کے رپورٹ پر روزنامچہ میں ندیم محمد خان ولد فدا محمد خان آف لوند خوڑ کے خلاف دفعہ 107کے تحت مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی۔ دریں اثنا ء پارٹی کی مرکزی ڈسپلنری کمیٹی نے پی ٹی آئی کے رہنماء ندیم محمد خان آف لوند خوڑ کو شوکاز نوٹس جاری کر کے تحریری جواب طلب کر لیا، آخری اطلاع آنے تک پارٹی کے مقامی قائدین مفاہمت کرنے کے لیے سرگرم عمل ہیں لیکن تاحال دونوں فریقین میں مفاہمت نہیں ہوئی ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -