موجودہ دور حکومت میں مہنگائی مرض کی طرح پھیلی،اورنگزیب برکی

موجودہ دور حکومت میں مہنگائی مرض کی طرح پھیلی،اورنگزیب برکی

  



  

لاہور(نمائندہ خصوصی)پاکستان پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنماء سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کے رکن اورنگزیب برکی نے پیپلز لیبر بیورو پنجاب کے سابق سیکرٹری اطلاعات محمد سلیم مغل کے ہمراہ جاری حقائق نامہ میں کہا ہے کہ مودہ حکومت بدترین دور، مہنگائی مرض کی طرح پھیل۔ 17 ماہ گزر جانے کے باوجود بھی حکمران عوام کو کوئی بھی ریلیف فراہم کرنے میں مکمل طور پر ناکام رہے۔ نئے پاکستان میں تبدیلی کے اثار آٹا چینی بحران کی صورت میں تسلسل کے ساتھ جاری ہیں۔ معاشی پالیسی کے میدان میں بد انتظامی سے انسانی حقوق کا بیڑہ غرق ہوگیا۔ مزید ایک کروڑ لوگ غربت کی لکیر سے نیچے چلے گئے۔

عمران خان کی حکومت نے اپنے پہلے 17 ماہ میں قرضہ میں 11ہزار ارب اضافہ کیا 70 سالہ مجموعی قرضے میں 33 فیصد اضافہ کیا۔ مجموعی قرضے 30 ہزار ارب سے بڑھ کر 41 ہزار ارب ہوگئے۔ جی ڈی پی گروتھ آدھی۔ 2.5 ہزار ارب کمی ہوئی۔ 5.8 فیصد سے 3.3 فیصد رہی۔ 14 لاکھ مزید روزگار سے محروم ہوئے۔ 33 فیصد روپیہ بیقدر ڈالر 118 روپے سے بڑھ کر 162 روپے ہوا۔ صنعتی ترقی 4.9 فیصد کمی ہوئی۔

  

5.43 فیصد سے منفی ہو کر 0.27 فیصد رہ گئی۔ بڑی صنعتی پیداوار منفی 3.5 فیصد ہوئی۔ زرعی ترقی 3.9 فیصد کمی سے 3.94 فیصد سے 0.85 فیصد ہوئی۔ اجناس پیداوار 3.2 فیصد کمی۔ 4.4 فیصد سے 1.13 فیصد رہی۔ 3 گناہ مہنگائی 3.5 فیصد سے بڑھ کر 13 فیصد۔ 51 فیصد سرمایہ کاری کم۔ 2 ارب ڈالر کا نقصان ہوا۔ 8 فیصد فی کس آمدنی کم ہوئی۔ 15 فیصد (50 ارب

مزید : میٹروپولیٹن 1 /رائے