نیشنل پارٹی کا ادریس خٹک لاپتہ ہونے کیخلاف احتجاجی مظاہرہ

نیشنل پارٹی کا ادریس خٹک لاپتہ ہونے کیخلاف احتجاجی مظاہرہ

  



پشاور (سٹی رپورٹر)پختونخوا جمہوری اتحاد کے زیر اہتمام نیشنل پارٹی کے لاپپتہ ہونے والے سابقہ عہدیدار ادریس خٹک کے رئای کے خلاف پشاور پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا مظاہرین نے ہاتھوں میں پلے کارڈز او بینرز اٹھا رکھے تھے جس پر انکے حق میں مطالبات درج تھے مظاہرے کی قیادت نیشنل پارٹی کے رہنما مختار باچا،مزدور کسان پارٹی کے رہنما عبدالرزاق ایڈوکیٹ،قومی وطن پارٹی کے رہنما اسد آفریدی اور طارق جبکہ عوامی ورکرز پارٹی کے رہنما شہاب خٹک اور دیگر رہنماوں نے کی۔اس موقع پر مطاہرین کا کہنا تھا کہ ادریس خٹک کو لاپتہ ہوئے تین ماہ ہو چکے ہے جسکے خلاف ہم نے عدالت میں درخواست بھی دی اور ایف ائی ار بھی درج کی مگر وہ تا حال بازیاب نہ ہوسکے۔انہوں نے کہا کہ ادریس خٹک کی گمشدگی کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے جبکہ پاکستان بھر میں جتنے بھی لاپتہ افراد ہے انکو بھی پاکستان کے ائین کے مطابق حقوق دئے جائے جو انکا بنیادی حق ہے۔انہوں نے منظور پشتین کی گرفتاری کی بھی مذمت کرتے مطالبہ کیا کہ پختونوں کے خلاف ظلم و ستم کا سلسلہ بند ہونا چاہئے۔مظاہرین نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ ادریس خٹک کی بازیابی ممکن بنانے کیلئے فوری اقدامات کریں جبکہ دیگر لاپتہ افراد کو بازیاب کرانے سمیت منظور پشتین کو بھی رہا کیا جائے بصورت دیگر احتجاج کا دائرہ کار وسیع کرینگے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر