نوشہرہ، 52لاکھ ڈکیتی میں ملوث بین الاضلاعی گروہ کا سرغنہ گرفتار

نوشہرہ، 52لاکھ ڈکیتی میں ملوث بین الاضلاعی گروہ کا سرغنہ گرفتار

  



نوشہرہ (بیورورپورٹ)پبی پولیس کی اہم کامیاب کاروائی۔52 لاکھ ڈکیتی میں ملوث بین الضلاعی گروہ کا سرغنہ گرفتار۔ مالمسروقہ برآمد۔ واردات میں استعمال ہونے والی موٹر سائکیل اور اسلحہ برآمد۔تفصیلات کے مطابق:۔04.11.2019 کو مروت فلنگ اسٹیشن ناصر پور کا مالک حمزہ ساکن پشاور اپنے کشیئر اشفاق کے ہمراہ حسب معمول HBL بینک پبی میں جمع کرنے جا رہے تھے۔بینک کے قریب پہنچنے پر دو نامعلوم موٹر سائیکل سواروں نے اسلحہ کی نوک پر روک کر اُن سے 52لاکھ 23ہزار روپے چھین کر فرار ہو گئے۔ ڈکیتی کے فوراًبعد پولیس جائے وقوعہ پر پہنچی۔ ڈسٹرکٹ پولیس افیسرکاشف ذوالفقار نے خالد خان DSPپبی کی سربراہی میں سید الامین خانSHOپبی اورساجد اقبال ASIپر مشتمل ٹیم تشکیل دیکر ملزمان کی جلد از جلد گرفتار ی اور مال مسروقہ کی برآمد گی کا ٹاسک حوالہ کیا۔ نوشہر ہ پولیس نے اپنی تفتیش کا آغاز کیا اور اس کیس کو ایک چیلنچ سمجھ کر ٹریس کرنے کے لیے کوششیں شروع کر دی۔ پولیس ٹیم نے دن رات کی انتھک محنت لگن اور جانفشانی سے اپنی پیشہ وارنہ صلاحیتوں کو بروئے کار لاتے ہوئے جدید طریقہ تفتیش سے استیفادہ حاصل کرتے ہوئے ملزمان کے سر غنہ شہزاد ولد اولس خان ساکن پشاور تک رسائی حاصل کرتے ہوئے گرفتار کرلیا۔ملزم سے واردات میں استعمال ہونے والے اسلحہ اور موٹر سائیکل بھی برآمد کر لیا گیا ہے۔ابتدائی تفتیش کے دوران ملزم نے تمام حقائق اُگل دئیے۔ ملزم کی نشاندہی پر اس کے حصے کی نقدی بھی برآمد کرلی گئی ہے ۔ مزید تفتیش جاری ہے۔اور تفتیش کے دوران گرفتار ملزمان سے اہم انکشافات متوقع ہیں۔ملزم کے دوسرے ساتھی کی گرفتاری کیلئے چھاپے جاری ہیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر