جعلی ڈپلومہ ثابت ہونے پر 3ملازم نوکری سے برخاست

جعلی ڈپلومہ ثابت ہونے پر 3ملازم نوکری سے برخاست

  



لاہور (پ ر)کمشنر پنجاب سوشل سیکورٹی تنویر اقبال تبسم کی جانب سے پنجاب ایمپلائز سوشل سیکورٹی انسٹی ٹیوشن میں میرٹ اور شفافیت کے فروغ کیلئے پیڈا ایکٹ کے تحت جعلی ڈپلومہ ثابت ہونے پر محکمہ کے تین ملازمین کو نوکری سے برخاست کر دیا گیا ہے۔ ترجمان پنجاب سوشل سیکورٹی ڈاکٹر بندیشہ کے مطابق برخاست ہونے والے ملازمین میں ڈائریکٹوریٹ آف سوشل سیکورٹی فیصل آباد (ویسٹ) کے جونیئر ٹیکنیشن عامر حسین ولد طالب حسین، سنیئر ٹیکنیشن محمد اسلم ولد محمد صدیق،جونیئر ٹیکنیشن، فخر حسین ولد محمد شریف شامل ہیں۔تینوں ملازمین کے کیسسز کو قانون کے مطابق ریکوری کیلئے انٹی کرپشن میں بھیجا جارہا ہے۔بعدازاں کمشنر پنجاب سوشل سیکورٹی تنویر اقبال تبسم کا سوشل سیکورٹی ایم این سی ایچ ہسپتال کوٹ لکھپت کا بھی دورہ کیا۔گائنی ٹاور کے حوالے سے کی گئی پیش رفت بارے ایم ایس ہسپتال اور ڈائریکٹر ڈو یلپمنٹ کی کمشنر سوشل سیکورٹی کو بریفنگ دی۔ کمشنر سوشل سیکورٹی نے ہسپتال میں جاری دیگر تعمیرات کا بھی جائزہ لیا،ہسپتال کے تمام شعبہ جات کا معائنہ، لیب میں دی جانے والے سہولیات بارے کارکنان سے بات چیت کی انہوں نے کہا کہ ا سٹیٹ آف دی آرٹ گائنی ٹاور اور ہسپتال میں جاری تعمیرات کو جلد از جلد مکمل کروانے کیلئے وزٹ جاری رکھے جائیں گے۔سوشل سیکورٹی ہسپتالوں کی بہتری کیلئے تمام وسائل بروئے کار لائے جا رہے ہیں۔

مزید : کامرس