افغانستان،امریکی طیارے کے حادثہ کی جگہ پر کنٹرول کیلئے جھڑپیں،ایک کمانڈو ہلاک

افغانستان،امریکی طیارے کے حادثہ کی جگہ پر کنٹرول کیلئے جھڑپیں،ایک کمانڈو ...

  



کابل(آئی این پی)افغانستان میں امریکی طیارہ کے گرنے کی جگہ پر پہنچنے کیلئے افغان کمانڈوز اور طالبان مابین مسلسل جھڑپیں جاری ہیں، موقع پر موجود طالبان کی بھاری تعداد نے ایلیٹ فورس کے 300جوانوں کو طیارہ حادثہ کی جگہ سے پیچھے دھکیل دیاہے،طالبان کی اندھی فائرنگ کے نتیجے میں 1اہلکار جاں بحق جبکہ 3زخمی ہو گئے ہیں، حادثہ کی جگہ کو اپنے کنٹرول میں کرنے کیلئے دوبارہ کوشش کی جائیگی۔ بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق پیر کو رات گئے تک فغانستان میں امریکی طیارہ کے گرنے کی جگہ پر پہنچنے کیلئے افغان کمانڈوز اور طالبان مابین مسلسل جھڑپیں جاری ہیں۔صوبہ غزنی کے پولیس چیف نے میڈیا کو بتایا کہ موقع پر موجود طالبان کی بھاری تعداد نے ایلیٹ فورس کے 300جوانوں کو طیارہ حادثہ کی جگہ سے پیچھے دھکیل دیاہے۔طالبان کی اندھی فائرنگ کے نتیجے میں 1اہلکار جاں بحق جبکہ 3زخمی ہو گئے ہیں۔ حادثہ کی جگہ کو اپنے کنٹرول میں کرنے کیلئے دوبارہ کوشش کی جائیگی۔ محمد خالد وردک نے منگل کے روز کہا،اس کے نتیجے میں ایک کمانڈو فوجی ہلاک ہوا اور تمام کمانڈو فورس پیچھے ہٹ گئیں اور واپس شہر لوٹ گئیں۔انہوں نے مزید کہا کہ افغان کمانڈوز دوبارہ علاقے تک رسائی حاصل کرنے کی کوشش کریں گے۔طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے واٹس ایپ کے ذریعہ اپنے ایک پیغام میں کہا کہ یہ حادثہ صوبہ غزنی میں طالبان زیر کنٹرول سدو خیل کے علاقے میں پیش آیا۔مجاہد نے کہا کہ ایک خصوصی امریکی طیارہ جو انٹیلیجنس مشن پر تھا کو طالبان نے حکمت عملی کے ساتھ گولی مار دی۔طیارے میں موجود تمام افراد بشمول سی آئی اے کے اعلی عہدے دار مارے گئے۔افغانستان میں امریکی فوج کے ترجمان نے تصدیق کی ہے کہ امریکی بمبارڈیر ای 11A طیارہ گر کر تباہ ہوگیا تھا۔

مزید : علاقائی