چھابڑی فروشوں کیلئے قانونی مسودہ تیار،لائسنس کی مدت 5سال،ماہانہ فیس 500روپے مقرر،بلدیاتی عملے کیلئے بھی سزائیں تجویز

چھابڑی فروشوں کیلئے قانونی مسودہ تیار،لائسنس کی مدت 5سال،ماہانہ فیس 500روپے ...

  



اسلام آباد (نیوزایجنسیاں) وفاقی حکومت نے چھوٹے کاروبار کے فروغ کے سلسلے میں چھابڑی فروشوں کے کام کو بھی باضابطہ بنانے کا فیصلہ کرلیا، چھابڑی فروشوں کے حقوق کے تحفظ کیساتھ ساتھ کاروبار کو بھی لائسنس سے مشروط کر دیا۔نجی ٹی وی کے مطابق دستیاب چھابڑی فروشوں کیلئے تیار مسودہ قانون کے مطابق کاروبارکیلئے 5 سال کا لائسنس لینا ہو گا، 500 روپے ماہانہ فیس بھی دینا ہوگی، یہ لائسنس کسی اور کے نام منتقل بھی نہیں ہو سکے گا۔بلدیاتی حکومت چھابڑی فروش کا علاقہ بدل سکے گی، عمل نہ کرنے پر سامان ضبط کر لیا جائے گا تاہم نقل مکانی پر رضامندی کی صورت میں بلدیاتی عملہ سامان اور نقصان ادا کرنے کا پابند ہوگا۔ بے جا تنگ کرنے پر بلدیاتی حکومتی عملہ کیلئے بھی سزا کی تجویز کی گئی ہے۔بل میں کہا گیا کہ کسی وجہ کے بغیر اشیا ء ضبط کرنے پر متعلقہ اہلکار کو 20 ہزار جرمانہ ہو گا، چھابڑی فروش کی اشیا ء ضبط کرنا قابل ضمانت جرم ہوگا۔

چھابڑی فروش

مزید : صفحہ اول