کرانا وائرس،چین میں ہلاکتیں 106،متاثرین 4ہزار سے تجاوز کر گئے

  کرانا وائرس،چین میں ہلاکتیں 106،متاثرین 4ہزار سے تجاوز کر گئے

  



بیجنگ(نیوزایجنسیاں)چین کے امیگریشن حکام نے چینی شہریوں کو بیرون ملک سفر ملتوی کرنے کا مشورہ دیا ہے تاکہ کرونا وائرس کے پھیلا ؤکو روکا جا سکے۔قومی امیگریشن انتظامیہ نے کہا ہے کہ اس مشورے کا مقصد چینی اور غیر ملکی شہریوں دونوں کی زندگی اورصحت کا تحفظ کرنا اور غیر ضروری نقصان سے بچنا ہے کیونکہ چند ملکوں اور علاقوں نے وائرس کے پھیلا کے پیش نظر داخلے پر پابندیاں لگا دی ہیں۔انتظامیہ کا کہنا ہے کہ سرحدوں پر لوگوں کی آمدورفت کم کرنے سے وبائی مرض کے پھیلا ؤکو روکنے میں مدد ملے گی۔حکام نے کہا ہے کہ جن افراد کو سانس کے انفیکشن کی علامات مثلا بخار، کھانسی اور سانس لینے میں دشواری کا سامنا ہو تو فوری طور پر سرحد پار سفر کا ارادہ ترک کر لیں تاکہ طبی امداد حاصل کر سکیں، ایسے مسافروں کو اپنے سفرنامے اور سفری معلومات حکام کو فراہم کرنی چاہیے۔دوسری طرف کروناوائرس سے چین میں ہلاک اور متاثرہ افراد کی تعداد مسلسل بڑھ رہی ہے جبکہ دیگر ملکوں میں بھی مریضوں میں اس وائرس کی تشخیص سامنے آرہی ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق چین میں کرونا وائرس سے مزید24 افراد ہلاک ہوگئے جس کے بعد مجموعی طور پر چین میں وائرس سے ہلاک افراد کی تعداد 106 ہوگئی۔حکام کے مطابق 1300 نئے کیسز بھی رپورٹ ہوئے ہیں جنکے بعد چین میں مہلک وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 4 ہزار سے زائد ہوگئی ہے۔ دارالحکومت بیجنگ میں بھی کرونا وائرس سے پہلی ہلاکت رپورٹ ہوگئی ہے، مرنے والی بچی کی عمر 9 ماہ تھی۔جرمنی میں بھی کرونا وائرس کا پہلا کیس سامنے آگیا ہے۔

کروناوائرس

مزید : صفحہ اول