کرونا وائرس، اورنج لائن ٹرین منصوبے پر کام بند، ہاٹ لائن قائم لیکن پاک فوج سے مدد لی جائے گی یا نہیں ؟ اعلان ہوگیا

کرونا وائرس، اورنج لائن ٹرین منصوبے پر کام بند، ہاٹ لائن قائم لیکن پاک فوج سے ...
کرونا وائرس، اورنج لائن ٹرین منصوبے پر کام بند، ہاٹ لائن قائم لیکن پاک فوج سے مدد لی جائے گی یا نہیں ؟ اعلان ہوگیا

  



لاہور،اسلام آباد(نیوزایجنسیاں) کورونا وائرس کے پھیلنے کے خطرے کے پیش نظر اورنج ٹرین منصوبے پر کام عارضی طور پر روک دیا گیا اور کام کرنے والے چینی باشندوں کے کررونا وائرس ٹیسٹ شروع کردئیے گئے۔اورنج ٹرین انتظامیہ کے مطابق ٹرین منصوبے پر اِس وقت 500 چینی باشندے کام کر رہے ہیں جو چھٹیوں میں اپنے ملک جاتے رہتے ہیں۔چین میں کورونا وائرس کے باعث خدشہ ہے کہ یہ وائرس کہیں پاکستان نہ پھیل جائے اور اسی خطرے کے پیش نظر چینی باشندوں کی کورونا اسکیننگ کی جاری ہے۔

دوسری طرف ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق کرونا وائرس کے معاملہ پر چین میں مقیم پاکستانیوں کیلئے ہاٹ لائن قائم کردی گئی۔ گوان ژو میں پاکستانی قونصلیٹ جنرل میں ہاٹ لائن قائم کی گئی ہے۔ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق قونصل جنرل ڈاکٹر دیار خان سے +8618813294841پر رابطہ کیا جا سکتا ہے۔علاوہ ازیں وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر ظفر مرز ا نے کہا ہے کہ کروناوائرس کے حوالے سے ملک بھر کے ہسپتالوں کو خطوط لکھ دیئے ہیں اور صوبوں نے ہسپتالوں میں کرونا وائرس کے مریضوں کے علیحدہ ہسپتال بھی مختص کر دیا ہے،کرونا وائرس سے بچاو¿ کے حوالے سے پاک فوج کے رضاکاروں سے بھی خصوصی مدد لی جائے گی۔

منگل کوظفر مرزا کی زیر صدارت کرونا وائرس سے متعلق بین الصوبائی جائزہ اجلاس ہوا، اجلاس میں تمام صوبوں کے نمائندے، پاک فوج کے نمائدے اور دیگر ماہرین صحت نے شرکت کی، اجلاس میں معاون خصوصی ڈاکٹر ظفر مرزا کی اب تک کرونا وائرس سے بچائو کیلئے اقدامات پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد /پنجاب /لاہور